Sunday , August 20 2017
Home / اضلاع کی خبریں / اڑیسہ کے 300بندھوا مزدوروں کو چھٹکارا

اڑیسہ کے 300بندھوا مزدوروں کو چھٹکارا

پداپلی۔5ڈسمبر، ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) برائے نام مزدوری پر کام کررہے غریب پریشان حال کھانے کپڑے کے لئے نقل مقام کرکے اڑیسہ سے آئے ہوئے خاندانوں نے متحد ہوکر جدوجہد کی اور انسانی حقوق تنظیموں نے ان کا ساتھ دے کر دن رات سردی گرمی میں کھلے آسمان کے نیچے ٹاٹ پر دوں کی جھونپڑی میں رہ کر اینٹ بنانے والے خاندانوں کو ان کے وطن واپسی کے انتظامات کئے گئے ۔اینٹ کی بھٹی کے مالک سپر وائزر کے حملے میں حاملہ خاتون مزدور کی موت پر بڑے پیمانے پر احتجاج ہوا۔ جس پر اینٹ کی بھٹی کے مالک شیام لال اور ان کے پاس کام کرنے والے سپر وائزر کو گرفتار کرتے ہوئے آر ڈاو نارائن ، تحصیلدار انوپما راؤ ، ڈپٹی لیبر کمشنر گاندھی کی موجودگی میں متوفیہ کی آخری رسومات کے لئے 50ہزار اور دیگر ضروریات کے تحت 20 ہزار جملہ 70 ہزار روپئے متاثرہ کو دیئے گئے اور اینٹ کی بھٹی پر کام کرنے والے سبھی مزدوروں کو اڑیسہ حکومت کے خرچ پر واپس بھیجنے اور ا ن کے ساتھ نعش کو بھی ایمبولنس میں رکھ کر بھیجنے کا انتظام بھی کیا گیا۔ اس موقع پر مختلف قائدین انسانی حقوق کمیشن دانشوروں کی جانب سے آر ڈی او کو فون کالس وصول ہوئے کہ متاثرین کے ساتھ انصاف کیا جائے۔ کودنڈہ رام، ملے پلی لکشمیا، سی پی آئی ریاستی سکریٹری چاڈا وینکٹ ریڈی وغیرہ موجود تھے۔

TOPPOPULARRECENT