Tuesday , September 26 2017
Home / Top Stories / اکون سبھروال نے رخصت واپس لے لی ، منشیات کے خلاف جنگ کا اعلان

اکون سبھروال نے رخصت واپس لے لی ، منشیات کے خلاف جنگ کا اعلان

نشیلی سرگرمیوں کو آہنی پنجے سے کچلنے کا عزم ، خاطیوں کو ہرگز معاف نہیں کیا جائے گا
حیدرآباد ۔ 15 ۔ جولائی : ( سیاست نیوز) : حیدرآباد میں منشیات اسکام کو منظر عام پر لانے والے اکسائز انفورسمنٹ کے ڈائرکٹر اکون سبھروال نے اپنی 10 روزہ رخصت سے دستبرداری اختیار کرلی ۔ منشیات کی جنگ میں حکومت کا مکمل تعاون ہونے کا دعویٰ کرتے ہوئے نشیلی سرگرمیوں کو آہنی پنجے سے کچل دینے کا عزم کیا کسی بھی دباؤ کو قبول نہ کرنے اور نہ ہی کسی سے گھبرانے کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ قصور واروں کو ہرگز معاف نہیں کیا جائے گا ۔ منشیات کے اسکینڈل کا بھانڈا پھوڑتے ہوئے سرخیاں بٹورنے والے اکون سبھروال پر فلم ہستیوں کو نوٹس دینے کے بعد دباؤ بڑھ گیا تھا اور مختلف چہ میگوئیاں شروع ہوگئی تھیں اچانک ان کے 10 دن کی رخصت منظور ہونے پر شکوک کو تقویت پہونچ گئی تھی حالانکہ اکون سبھروال نے اس کی تردید کی تھی ۔ باوثوق ذرائع سے پتہ چلا ہے کہ چیف منسٹر تلنگانہ کے سی آر نے ٹیلی فون پر اکسائز انفورسمنٹ کے ڈائرکٹر اکون سبھروال سے بات چیت کرتے ہوئے منشیات کے خلاف چھیڑی گئی جنگ کی ستائش کرتے ہوئے انہیں رخصت سے دستبردار ہوجانے کا مشورہ دیا اور منشیات کی لعنت سے حیدرآباد کو پاک بنانے میں حکومت کی جانب سے مکمل تعاون فراہم کرنے کا وعدہ کرتے ہوئے بے خوف ہو کر اپنا کام کرنے کی ہدایت دی ہے ۔ چیف منسٹر کی جانب سے مکمل تعاون حاصل ہونے پر اکون سبھروال نے اپنی رخصت کو ملتوی کرلیا ۔ جس کو حکومت نے فوری اثر کے ساتھ منظوری دے دی ۔ ریاستی وزیر داخلہ این نرسمہا ریڈی نے کسی دباؤ کے تحت اکون سبھروال کو رخصت پر روانہ کرنے کی تردید کرتے ہوئے کہا کہ غیر سماجی سرگرمیوں کے خلاف سخت کارروائی کرنے کی حکومت نے پولیس کو مکمل آزادی دی ہے ۔ باوثوق ذرائع سے پتہ چلا ہے کہ تعلیمی اداروں میں منشیات کے اسکام اور طلبہ کو نشے کا غلام بنانے کی اطلاعات منظر عام پر آنے کے بعد خانگی تعلیمی اداروں نے ان کے وقار کو نقصان پہونچانے کی ڈپٹی چیف منسٹر کڈیم سری ہری سے شکایت کی تھی جس پر ڈپٹی چیف منسٹر نے منشیات اسکام سے نمٹنے کے معاملے میں غیر ضروری چستی پھرتی کا مظاہرہ کرنے کا اکون سبھروال پر الزام عائد کرتے ہوئے ان کی چیف منسٹر اور ڈی جی پی سے شکایت کی تھی ۔ تلگو فلم انڈسٹری کے 12 شخصیتوں کو نوٹس جاری کرنے کے بعد دباؤ مزید بڑھ گیا تھا جس کو دیکھتے ہوئے ان کی دو ماہ قبل رخصت کے لیے دی گئی درخواست کو منظور کرلیا گیا تھا ۔ اکون سبھروال نے آج میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ ان کی رخصت پر مختلف شعبوں سے چہ میگوئیاں شروع ہوجانے کے بعد انہوں نے اپنی رخصت کو منسوخ کرالی ہے ۔ انہوں نے جو جنگ چھیڑی ہے اس کو انجام تک پہونچانے تک اپنی ذمہ داری بخوبی نبھائیں گے ۔ تحقیقات میں جو بھی قصور وار پائے جائیں گے چاہے وہ کتنے ہی با اثر ہو ان کے خلاف کارروائی کی جائے گی ۔ منشیات کا جن سے تعلق ہے ان سب سے پوچھ تاچھ کی جائے گی ۔ سیکشن 67 کے تحت نوٹس جاری کی گئی ہے ۔ تفتیش کے بعد جو منشیات استعمال کررہے ہیں ان کے خلاف قانونی کارروائی کی جائے گی ۔ ضرورت پڑنے پر تحقیقات میں پولیس کی مدد بھی حاصل کی جائے گی ۔ اکون سبھروال نے کہا کہ ڈرگس ریاکٹ میں پختہ ثبوت ہاتھ لگنے کے بعد ہی نوٹس جاری کی جارہی ہے ۔ منشیات اسکینڈل میں ملوث افراد کو ہرگز بخشا نہیں جائے گا ۔ چیف منسٹر کے سی آر نے منشیات کا جال پھیلانے والوں کے خلاف سخت کارروائی کرنے کی ہدایت دی ہے ۔ منشیات کے فروغ کی حوصلہ افزائی کرنے والوں کو بھی معاف نہیں کیا جائے گا ۔ حیدرآباد برانڈ کو نقصان پہونچانے والوں کو کیفر کردار تک پہونچایا جائے گا ۔ اس معاملے میں کسی سے کوئی سمجھوتہ نہیں کیا جائے گا اور نہ ہی کوئی دباؤ قبول کیا جائے گا ۔۔

TOPPOPULARRECENT