Saturday , September 23 2017
Home / دنیا / اگر امریکہ پر حملہ ہوجائے … جاپان کے عوام ’’سونی ٹی وی ‘‘ دیکھ رہے ہوں گے : ٹرمپ

اگر امریکہ پر حملہ ہوجائے … جاپان کے عوام ’’سونی ٹی وی ‘‘ دیکھ رہے ہوں گے : ٹرمپ

واشنگٹن ۔6 اگسٹ ۔(سیاست ڈاٹ کام) ریپبلکن صدارتی امیدوار ڈونالڈ ٹرمپ نے امریکہ کے قریبی حلیف جاپان پر آج شدید تنقید کی اور کہا کہ اگر امریکہ پر حملہ ہوجائے تو تمام جاپانی اپنے گھروں میں بیٹھ کر سونی ٹیلی ویژن دیکھتے رہیں گے ۔ انھوں نے آئیوا میں انتخابی ریالی سے خطاب کرتے ہوئے کہا سب جانتے ہیں کہ امریکہ کا جاپان کے ساتھ معاہدہ ہے کہ اگر جاپان پر حملہ کیا جائے تو ہم پوری طاقت کے ساتھ اس کامقابلہ کریں گے ، جاپان کو کچھ کرنے کی ضرورت نہیں ہوگی ۔ اور اگر ہم (امریکہ) پر حملہ ہوجائے تو جاپان کو کچھ کرنے کی ضرورت نہیں ہوگی ، وہ اپنے گھر پر بیٹھے سونی ٹیلی ویژن پر نظارہ کرتے رہیں گے ۔؟ آخر یہ کس قومیت کی معاملت ہے ؟ جاپان ایشیائی خطہ میں امریکہ کا ایک کٹر حلیف ملک ہے ۔ امریکہ ۔ جاپان اتحادمعاہدہ کا حوالہ دیتے ہوئے ٹرمپ نے کہا یہ انتہائی مضحکہ خیز ہے ۔ انھوں نے کہا کہ جاپان کو مجبور کیا جانا چاہئے کہ وہ جزیرہ نما اس ملک کے تحفظ کی بناء امریکی فوجی مصارف کا 100 فیصد ادا کرے ۔ اس وقت 50 فیصد کی جو رقم فراہم کی جارہی ہے وہ ناکافی ہے ۔ اس وقت جاپان میں تقریباً 47 ہزار امریکی فوجی موجود ہیں۔ اپنی تقریر میں ٹرمپ نے کہا کہ صرف ایک جاپان ہی نہیں امریکہ دیگر کئی ممالک جیسے جنوبی کوریا ، جرمنی اور سعودی عرب کی بھی حفاظت کرتا ہے اور یہ ممالک اس کی قیمت ادا نہیں کرتے ۔ ان ممالک کو مصارف ادا کرنا چاہئے ۔ آج 40 سال پہلے کے حالات نہیں ہیں اب لو اور دو کی پالیسی ہونی چاہئے ۔ ٹرمپ نے ڈیموکریٹک حریف ہلاری کلنٹن کی پالیسیوں پر بھی نکتہ چینی کی ۔ انھوں نے کہاہلاری کلنٹن نے کہا تھا کہ یہ انتہائی افسوسناک بات ہے وہ (ٹرمپ) ہمارے حلیفوں کے ساتھ دوستی نہیں چاہتے لیکن ہم ایسا نہیں کریں گے ۔ ٹرمپ نے کہا کہ ایک مرتبہ حلیف ممالک جب ان کی فضول بات سن لیں گے اور یہ بات ہے بھی فضول کہ وہ قیمت کیوں ادا کریں گے ؟

TOPPOPULARRECENT