Wednesday , September 20 2017
Home / شہر کی خبریں / ایام عزاء برقی ، پانی کی موثر سربراہی ، صحت و صفائی پر خصوصی توجہ

ایام عزاء برقی ، پانی کی موثر سربراہی ، صحت و صفائی پر خصوصی توجہ

محرم انتظامات پر اجلاس ، ڈپٹی چیف منسٹر محمد محمود علی کا خطاب
حیدرآباد ۔ 13۔ ستمبر (سیاست نیوز) ڈپٹی چیف منسٹر محمد محمود علی نے کہا کہ ماہِ محرم کے دوران حکومت کی جانب سے موثر انتظامات کئے جائیں گے ۔ انہوں نے کہا کہ چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے ہر سال کی طرح اس سال بھی ماہِ محرم کے دوران تمام محکمہ جات کی جانب سے موثر انتظامات کی ہدایت دی ہے۔ تمام متعلقہ محکمہ جات جیسے وقف بورڈ ، پولیس ، واٹر ورکس ، ٹرانسکو ، جی ایچ ایم سی کی جانب سے انتظامات کو قطعیت دیدی گئی ہے۔ ڈپٹی چیف منسٹر نے آج سکریٹریٹ میں محرم کے انتظامات پر جائزہ اجلاس منعقد کیا۔ اس اجلاس میں حکومت کے مشیر اے کے خاں ، سکریٹری اقلیتی بہبود سید عمر جلیل ، صدرنشین وقف بورڈ محمد سلیم ، صدرنشین اقلیتی فینانس کارپوریشن سید اکبر حسین ، صدرنشین سٹ ون عنایت علی باقری، کمشنر پولیس حیدرآباد مہیندر ریڈی ، ڈپٹی کمشنر ساؤتھ زون ست نارائنا ، ارکان اسمبلی سی ایچ رام چندرا ریڈی ، احمد پاشاہ قادری ، رکن وقف بورڈ نثار حسین حیدر آغا، چیف اگزیکیٹیو آفیسر وقف بورڈ منان فاروقی ، سکریٹری ڈائرکٹر اردو اکیڈیمی پروفیسر ایس اے شکور ، مولانا وحید الدین حیدر جعفری کے علاوہ دیگر محکمہ جات کے عہدیداروں اور شیعہ تنظیموں کے نمائندوں نے شرکت کی۔ تمام محکمہ جات نے یقین دلایا کہ ایام عزاء کے دوران برقی اور پانی کی موثر سربراہی کے دوران صحت و صفائی کے انتظامات پر خصوصی توجہ دی جائے گی ۔ ڈپٹی چیف منسٹر محمد محمود علی نے عاشور خانوں کی تعمیر و مرمت اور گرانٹ ان ایڈ کی عاجلانہ اجرائی کا تیقن دیا ۔ انہوں نے کہا کہ پرانے شہر کے علاقہ میں امن و ضبط کی برقراری کیلئے پولیس نے انتظامات کو قطعیت دیدی ہے۔ محمود علی نے کہا کہ حیدرآباد کی یہ روایت ہے کہ محرم کو تمام مذاہب کی جانب سے عقیدت و احترام کے ساتھ منایا جاتا ہے۔ انہوں نے شیعہ نمائندوں اور تنظیموں کے قائدین کو یقین دلایا کہ ہر سال کی طرح بہتر انتظامات کئے جائیں گے اور اس سلسلہ میں فنڈس کی کوئی کمی نہیں ہے۔ اجلاس کے دوران اس وقت کسی قدر ماحول کشیدہ ہوگیا جب شیعہ تنظیموں نے وقف بورڈ کی جانب سے عاشور خانوں کی مرمت میں تاخیر کا الزام عائد کرتے ہوئے احتجاج کیا۔ صدرنشین وقف بورڈ کی تقریر کے دوران نمائندوں نے اپنی ناراضگی جتائی جس پر محمد سلیم نے تیقن دیا کہ جلد ہی اس سلسلہ میں اقدامات کئے جائیں گے۔ شیعہ تنظیموں نے الزام عائد کیا کہ گزشتہ تین برسوں سے گرانٹ ان ایڈ اور عاشور خانوں کی مرمت کے بارے میں صرف تیقنات دیئے جارہے ہیں۔ انہوں نے گزشتہ تین برسوں میں گرانٹ ان ایڈ اور مرمت کی تفصیلات جاری کرنے کا مطالبہ کیا۔ ڈپٹی چیف منسٹر نے شیعہ تنظیموں اور ان کے قائدین کو یقین دلایا کہ حکومت عاشور خانوں کی تعمیر و مرمت پر فوری توجہ دے گی۔ اجلاس میں یوم عاشورہ کے دن جلوس کے راستہ پر انتظامات کے سلسلہ میں پولیس عہدیداروں نے تفصیلات بیان کی۔

TOPPOPULARRECENT