Tuesday , September 26 2017
Home / عرب دنیا / ایتھوپیا کے ہزاروں یہودیوں کی اسرائیل میں آبادکاری منظور

ایتھوپیا کے ہزاروں یہودیوں کی اسرائیل میں آبادکاری منظور

تل ابیب۔ 16 نومبر (سیاست ڈاٹ کام) اسرائیلی حکومت نے یہودی سلسلہ نسب سے تعلق کے دعویدار ہزاروں ایتھوپیائی یہودیوں کو صہیونی ریاست میں بسانے کی منظوری دے دی ہے۔ دو سال قبل یہ دعوی سامنے آیا تھا کہ ایتھوپیا میں کوئی یہودی باقی نہیں رہا۔ ایک بیان میں اسرائیلی وزیر اعظم بنجامن نیتن یاہو نے بتایا کہ “ہم نے ایتھوپیا میں یہودی نسل سے تعلق رکھنے والی آخری نسل کو اسرائیل میں اپنے ہم عقیدہ ساتھیوں سے ملانے کا اہم فیصلہ کیا ہے۔ اسرائیل نے 1984 سے 1991 کی مدت کے دوران ہزاروں ایتھوپیائی یہودیوں کو ‘قانون حق واپسی’ کے تحت اسرائیل لا کر آباد کیا۔ قانون حق واپسی کے تحت اسرائیل آنے والے تمام یہودیوں کو اسرائیلی شہریت دی گئی۔ اتوار کے روز کئے جانے والے اسرائیلی فیصلہ سے ایتھوپیا میں فلاش مرا نامی گروہ کے وہ یہودی مستفید ہوں گے جنہوں نے 18 ویں اور 19 ویں صدی کے دوران اکراہ کے تحت یہودیت ترک کر کے عیسائیت قبول کی۔

TOPPOPULARRECENT