Friday , July 28 2017
Home / Top Stories / ایران حملہ میں امریکہ اور سعودی عرب ملوث

ایران حملہ میں امریکہ اور سعودی عرب ملوث

پاسداران انقلاب کا الزام، عالمی اتحاد کیلئے صدر ایران کی اپیل ، قطر بحران پر امیر کویت کی بات چیت
تہران ۔ 7 جون (سیاست ڈاٹ کام) ایران کے پاسداران انقلاب نے آج اسلامی جمہوریہ ایران پر دولت اسلامیہ کے دو حملوں کے انتقام کا عہد کرتے ہوئے کہا کہ اس حملہ میں امریکہ اور سعودی عرب ’’ملوث‘‘ ہیں۔ پاسداران انقلاب نے کہا کہ ہم بے قصوروں کا خون اس طرح بہنے نہیں دیں گے۔ اس کا انتقام لیں گے۔ صدر ایران حسن روحانی نے علاقائی اور بین الاقوامی تعاون اور اتحاد کی ضرورت پر زور دیا اور کہا کہ دہشت گردی ایک عالمی مسئلہ ہے۔ انتہاء پسندی، تشدد اور دہشت گردی سے جنگ کیلئے علاقائی اور بین الاقوامی تعاون آج کی دنیا کی اہم ترین ضرورت ہے۔ انہوں نے کہا کہ آج کے حملہ سے علاقائی دہشت گردی، انتہاء پسندی اور تشدد کے خلاف جنگ کرنے کے پختہ ارادے میں مزید تقویت حاصل ہوگئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ایران ایک بار پھر ثابت کردے گا کہ تمام بہی خواہوں کے مزید اتحاد، یکجہتی اور اپنے طاقتور صیانتی ڈھانچہ کے ساتھ سازشوں کا جال چھوڑا جاسکتا ہے۔ دبئی سے موصولہ اطلاع کے بموجب امیر کویت شیخ صباح الاحمد الصباح نے دبئی میں امارات کے عہدیداروں سے ملاقات کی۔ ایک دن قبل انہوں نے قطر کے بحران کی یکسوئی کیلئے سعودی عرب سے بات چیت کی تھی۔ انہوں نے دبئی کے حکمراں شیخ محمد بن راشد المختوم ولیعہد شہزادہ ابوظہبی شیخ محمد بن زائد النہیان، وزیرخارجہ امارات شیخ عبداللہ سے وسیع تر تبادلہ خیال کیا۔ توقع ہیکہ وہ متحدہ عرب امارات سے قطر جائیں گے۔ جدہ میں الف سلمان سے خلیجی تعاون کونسل کو درپیش بحران پر بات چیت کریں گے۔ کویت بھی تعاون کونسل کا رکن ہے اور امیر کویت نے سعودی عرب، قطر اور دیگر خلیجی ممالک کے درمیان 2014ء کے سفارتی تنازعہ کے دوران اہم کردار ادا کیا تھا۔ پیرس سے موصولہ اطلاع کے بموجب ایس اینڈ پی گلوبل ریٹنگ نے آج قطر کی کریڈٹ ریٹنگ میں ایک مقام کی کمی کردی۔ واشنگٹن سے موصولہ اطلاع کے بموجب امریکہ نے آج تہران پر دہشت گرد حملوں کی مذمت کی۔

TOPPOPULARRECENT