Thursday , August 17 2017
Home / کھیل کی خبریں / ایشیا کپ کا آج ہند ۔ بنگلہ دیش مقابلے سے آغاز ، دھونی کی فٹنس پر توجہ

ایشیا کپ کا آج ہند ۔ بنگلہ دیش مقابلے سے آغاز ، دھونی کی فٹنس پر توجہ

میرپور، 23 فبروری (سیاست ڈاٹ کام) ہندوستان آئندہ ماہ کے ورلڈ ٹوئنٹی 20 کیلئے اپنی تیاریوں کے قطعی مرحلے میں داخل ہورہا ہے جس میں وہ کل یہاں ایشیا کپ کا افتتاحی مقابلہ کھیلے گا لیکن کپتان ایم ایس دھونی کی دستیابی کے بارے میں غیریقینی کیفیت کا ماحول برقرار ہے جس سے میزبانوں کے خلاف ٹورنمنٹ کے پہلے میچ میں شرکت سے قبل ٹیم انڈیا کا ردھم متاثر ہوجانے کا خطرہ ہے۔ دھونی گزشتہ روز ٹیم کے ٹریننگ سیشن کے دوران پیٹھ کی تکلیف سے دوچار ہوگئے جس پر بی سی سی آئی نے فوری پارتھیو پٹیل کو احتیاطی اقدام کے طورپر بنگلہ دیش روانہ کردیا۔ کپتان کے فٹنس پرجوش میزبانوں کے خلاف کل کے میچ سے قبل بدستور تشویش کا مرحلہ برقرار رہے گی ۔ بنگلہ دیش نے حالیہ عرصہ میں ایک سے زائد موقعوں پر بڑی ٹیموں کو ہراتے ہوئے اپنا دبدبہ خاص طورپر وطن کے میدانوں میں قائم کر رکھا ہے ۔ یہ براعظمی چمپیئن شپ آنے والے ورلڈ ٹی ٹوئنٹی کو ملحوظ رکھتے ہوئے معمول کے او ڈی آئی فارمیٹ سے انحراف کرتے ہوئے ٹوئنٹی 20 نوعیت کے مقابلوں میں کھیلی جائیگی  اور اس طرح ایشیائی ٹیموں کو آئندہ ماہ شروع ہونے والے میگا ایونٹس سے قبل درکار میچ پریکٹس حاصل ہوگی ۔ جہاں تک ہندوستان کا معاملہ ہے جنھیں خطابی دعویدار سمجھا جارہا ہے ، ایشیاء کپ میں اچھا پرفارمینس ورلڈ ٹی ٹوئنٹی سے قبل درکار حوصلہ بخشے گا ۔ گزشتہ سال کی او ڈی آئی سیریز میں بنگلہ دیش کی طرف سے لیفٹ آرم پیسر مستفیض الرحمن کے اُبھراؤ کو دیکھا گیا

جنھوں نے اپنی نپی تلی گیندوں کے ذریعہ ہندوستانی بیٹسمینوں کو حیرانی میں مبتلا رکھا۔ اس ٹورنمنٹ سے بھی ٹیم انڈیا کو موقع حاصل ہورہا ہے کہ ’مستفیض کوڈ ‘کا پتہ چلائیں جن کے خلاف ٹیم گزشتہ مرتبہ بری طرح ناکام رہی۔ ہندوستانیوں نے اپنی ٹی ٹوئنٹی تیاریوں کی شروعات آسٹریلیا کے خلاف اُنھیں کی سرزمین پر اور پھر وطن میں سری لنکا کے خلاف متواتر سیریز کامیابی کے ساتھ عمدہ طریقہ سے کی ہے ۔ رواں سال کھیلے گئے چھ ٹی ٹوئنٹی میچس میں سے ہندوستان نے پانچ جیتے اور واحد ناکامی اُنھیں پونے میں سری لنکا کے خلاف اُٹھانی پڑی تھی ۔ اگر ہندوستان ایشیاء کپ کے فائنلس تک رسائی حاصل کرتا ہے تو اُنھیں مزید پانچ ٹی ٹوئنٹی میچس کھیلنے کا موقع ملے گا ، جس سے ورلڈ ٹی ٹوئنٹی کی شروعات سے قبل اُن کے ٹی ٹوئنٹی میچس کی تعداد 11 ہوجائے گی اور ٹیم ڈائرکٹر روی شاستری کے مطابق یہ ہندوستان کیلئے بہت شاندار صورتحال ہوگی ۔ ٹیم انڈیا بیٹنگ میں ویراٹ کوہلی اور بولنگ میں آر اشوین پر زیادہ انحصار کریگی۔ بنگلہ دیش کی طاقت اُن کا بولنگ اٹیک بن چکی ہے جو مستفیض کے ساتھ تسکین احمد اور الامین حسین پر مشتمل ہے جو توقع ہے ہندوستانی بیٹسمینوں کیلئے بڑا چیلنج ثابت ہوں گے ۔ مستفیض کو پرکشش آئی پی ایل کنٹراکٹ ملا ہے اور وہ اپنے ساتھیوں کے ساتھ پھر ایک بار ہندوستانیوں کیلئے خطرہ بن سکتے ہیں۔ ان کے علاوہ کپتان مشرف مرتضیٰ اور آل راؤنڈر شکیب الحسن کو فراموش نہیں کیا جاسکتا جو کافی زبردست بین الاقوامی تجربہ رکھتے ہیں ۔ یہ جوڑی اگر ردھم میں آجائے تو سابق کپتان مشفیق الرحیم کے ساتھ مل کر کسی بھی ٹیم کو شکست دینے کی صلاحیت رکھتی ہے ۔ لیفٹ ہینڈ بیٹسمین سومیا سرکار ، ورلڈ کپ ہیرو محموداﷲ بھی بنگلہ دیش کی بیٹنگ لائن اپ کا اہم حصہ ہیں۔
٭ میچ کی شروعات شام 7 بجے(IST) ہوگی ۔

TOPPOPULARRECENT