Sunday , August 20 2017
Home / ہندوستان / ایل او سی پر سرینگر۔ مظفرآباد تجارت ایک ہفتے کیلئے معطل

ایل او سی پر سرینگر۔ مظفرآباد تجارت ایک ہفتے کیلئے معطل

ہندوستان کے ٹرک سے بھاری مقدا ر میں ہیروئن کی برآمدگی کا بظاہر شاخسانہ

سرینگر ، 25جولائی (سیاست ڈاٹ کام) لائن آف کنٹرول (ایل او سی) کے آر پار جموں وکشمیر اور پاکستان زیرقبضہ کشمیر کے درمیان سرینگر۔ مظفرآباد روڈ کے ذریعہ ہونے والی تجارت ایک ہفتے کیلئے معطل کردی گئی ہے ۔ سرکاری ذرائع نے یہ اطلاع دیتے ہوئے کہا کہ سرحد پار مظفر آباد کے انتظامیہ نے ہمیں ایک مکتوب بھیجا ہے جس میں ایل او سی کے پار تجارت کو ایک ہفتے تک معطل رکھنے کی بات کہی گئی ہے۔ انہوں نے بتایا کہ مظفرآباد انتظامیہ نے تجارت کی معطلی کی کوئی وجہ ظاہر نہیں کی ہے ۔ ذرائع نے بتایا کہ شمالی کشمیر کے ضلع بارہمولہ میں دونوں طرف کے تاجروں کے درمیان تجارت کا سلسلہ 2008ء سے جاری ہے ۔ انہوں نے بتایا کہ یہ تجارت ہفتے میں چار دن منگل سے لیکر جمعہ تک ہوتی ہے ۔مظفرآباد انتظامیہ کی طرف سے دونوں طرف تجارت کی معطلی کا فیصلہ وہاں سے آنے والے ٹرک سے 66.5 کیلو گرام ہیروئن کی برآمدگی کے چار دن بعد سامنے آیا ہے ۔ ذرائع نے بتایاکہ جس ٹرک سے ہیروئین برآمد ہوئی، اس کے ڈرائیور سید یوسف کو حراست میں لیا گیا تھا اور پوچھ گچھ جاری ہے۔ اس دوران پاکستانی میڈیا نے ٹریڈ سنٹر چکوٹھی کے انچارج ٹی ایف او میجر(ر) طاہر کاظمی کے حوالے سے کہا ہیکہ منشیات برآمدگی کے الزام کے بعد پیدا شدہ صورتحال کے پیش نظر ایک ہفتہ کیلئے سرینگر ۔مظفرآباد تجارت کو معطل کیا گیا ہے تاکہ اس معاملہ کی تحقیقات مکمل کر کے حقائق سامنے لائے جاسکیں۔بھارتی حکام نے اپنے وعدے کے مطابق تاحال ہمیں کسی بھی قسم کے ثبوت فراہم نہیں کئے جس کی وجہ سے تحقیقاتی عمل میں مشکل پیش آرہی ہے۔ دریں اثنا ایل او سی پر جاری کشیدگی کے پیش نظر ہفتہ وار پونچھ راولکوٹ راہِ ملن بس سرویس پیر کو مسلسل تیسرے ہفتے بھی معطل رہی۔ سرکاری ذرائع نے بتایا چکن دا باغ کے راستے ہر پیر کو ضلع پونچھ اور پاکستان زیر قبضہ کشمیر کے ضلع راولکوٹ کے درمیان چلنے والی بس سرویس بدستور معطل ہے ۔ یہ بس سریوس سرحدی کشیدگی کے پیش نظر احتیاطی اقدامات کے طور پر معطل رکھی گئی ہے۔ تاہم سرینگر اور مظفرآباد کے درمیان چلنے والی ہفتہ وار’کاروان امن‘ بس سرویس کے ذریعہ پیر کو پاکستان زیر قبضہ کشمیر سے 53 نئے مہمان وادی کشمیر پہنچ گئے ۔

سیکوریٹی فورسیس اور عسکریت پسندوں کے درمیان فائرنگ کا تبادلہ
سرینگر ۔ 25 جولائی (سیاست ڈاٹ کام) سیکوریٹی فورسیس اور عسکریت پسندوں کے درمیان کل رات دیر گئے ضلع باندی پورہ میں فائرنگ کا مختصر تبادلہ ہوا۔ پولیس نے آج کہا کہ آرمی اور پولیس کی مشترکہ پارٹی نے معمول کی چیکنگ کے دوران ایک ٹیکسی کو روکا ۔ گاڑی کے ڈرائیور نے ان کا اشارہ نظرانداز کیا اور گاڑی کچھ دور لے جاکر روکا۔تلاشی کیلئے اس گاڑی کو ضبط کرلیا گیا اور بعد میں گاڑی سے دستی بم اور بعض خالی کارتوس برآمد کئے گئے۔

TOPPOPULARRECENT