Saturday , September 23 2017
Home / ہندوستان / این آئی اے عہدیدار کے قتل کا اہم ملزم گرفتار

این آئی اے عہدیدار کے قتل کا اہم ملزم گرفتار

نوئیڈا میں تحقیقاتی عہدیداروں کی پوچھ تاچھ
لکھنؤ۔ 28 جون (سیاست ڈاٹ کام ) قومی جانچ ایجنسی (این آئی اے ) کے ڈپٹی ایس پی تنزیل احمد اور ان کی بیوی کے قتل کا اہم ملزم آج گرفتار کر لیا گیا۔اتر پردیش پولیس کی اسپیشل ٹاسک فورس (ایس ٹی ایف) نے تنزیل احمد اور ان کی اہلیہ کے قتل کے اہم ملزم منیر کو غازی آباد سے گرفتار کیا ہے ۔ اس کی گرفتاری پر دو لاکھ روپے کا انعام تھا۔ریاست کے ڈائریکٹر جنرل پولیس جاوید احمد نے منیر کی گرفتاری کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ مرکز اور ریاست کی جانچ ایجنسیاں اس سے ایس ٹی ایف کے نوئیڈا آفس میں پوچھ گچھ کر رہی ہیں۔ذرائع کے مطابق گرفتار منیر اور اس کے دو ساتھیوں کے پاس سے 09 ایم ایم کی تین پستول اور کچھ کارتوس برآمد ہوئے ہیں۔ وہ غازی آباد میں ایک انجینئرنگ کالج کے ہاسٹل میں تین دن سے چھپا تھا۔ایس ٹی ایف نے اطلاع ملتے ہی علی الصبح اسے گرفتار کرلیا۔بجنور کے سیوھارا علاقے میں گذشتہ2 اور 3اپریل کی رات شادی کی تقریب سے لوٹتے وقت تنزیل احمد اور ان کے خاندان پراندھا دھند فائرنگ کردی گئی تھی۔ مسٹر احمد کی موقع پر ہی موت ہو گئی تھی۔ ان کی بیوی نے چار دن بعد دہلی کے آل انڈیا انسٹی ٹیوٹ آف میڈیکل سائنسز ( ایمس )میں دم توڑ دیا تھا۔تنزیل احمد سیکورٹی فورس میں این آئی اے میں ڈیپوٹیشن پر آئے تھے ۔ انہیں 21 گولیاں ماری گئی تھیں۔ جس سے وہ موقع پر ہی ہلاک ہوگئے تھے جبکہ ان کی اہلیہ کی موت اپریل کو ہوئی تھی۔ ان کے ساتھ ان کی بیٹی اور بیٹا بھی تھا۔ دونوں بچ گئے تھے ۔ دونوں بچے کار کی پچھلی سیٹ پر تھے ۔ پٹھان کوٹ کے ائیر بیس پر ہوئے حملے کے سلسلے میں پاکستان سے آئی تحقیقاتی ٹیم کی مدد کے لئے بھی تنزیل احمد کی خدمات حاصل کی گئی تھیں۔تنزیل احمد اور ان کی اہلیہ کے قتل کے الزام میں ان کے تین قریبی رشتہ دار ، ریحان، جنیداور شاداب کو پہلے ہی گرفتار کیا جا چکا ہے ۔

TOPPOPULARRECENT