Sunday , August 20 2017
Home / شہر کی خبریں / این ٹی آر کی زندگی پر فلم تنازعہ کا شکار

این ٹی آر کی زندگی پر فلم تنازعہ کا شکار

چندرا بابو نائیڈو ہیرو اور مجھے ویلن بتانا ناقابل برداشت : لکشمی پاروتی
حیدرآباد ۔ 7 ۔ فروری : ( سیاست نیوز ) : فلم اسٹار سے سیاستداں بن جانے والے تلگو فلم انڈسٹری کی افسانوی شخصیت این ٹی آر کی زندگی پر بننے والی فلم شوٹنگ کے آغاز سے قبل تنازعہ کا شکار ہوگئی ہے ۔ این ٹی آر کی بیوہ لکشمی پاروتی نے فلم میں چندرا بابو نائیڈو کی جانب سے این ٹی آر کی پیٹھ میں خنجر گھونپنے کے مناظر کو فلم میں نہ دیکھانے پر عدالت سے رجوع ہونے کا اعلان کیا ہے ۔ تلگو فلموں کے ذریعہ عوام کے دلوں پر راج کرنے والے این ٹی آر نے 80 کے دہے میں سیاسی میدان میں قدم رکھا اور تلگو دیشم پارٹی تشکیل دیتے ہوئے صرف 9 ماہ میں لمبے عرصے سے ریاست پر راج کرنے والی کانگریس کو اقتدار سے بیدخل کرتے ہوئے نئے سیاسی دور کا آغاز کیا تھا ۔ یہی نہیں قومی سطح پر تمام جماعتوں کو ایک پلیٹ فارم پر اکٹھا کرتے ہوئے نیشنل فرنٹ تشکیل دیتے ہوئے قومی سیاست میں بھی کانگریس کا متبادل تیار کردیا تھا ۔ این ٹی آر کی سیاسی زندگی میں کئی نشیب و فراز آئے پہلی مرتبہ اقتدار حاصل کرنے والے این ٹی آر کو این بھاسکر راؤ نے اقتدار سے بیدخل کردیا تھا امریکہ سے واپس ہونے کے بعد این ٹی آر نے دوبارہ اقتدار پر قبضہ جمالیا تھا ۔ اس طرح 1994 کے عام انتخابات میں بھی این ٹی آر نے اپنے بل پر تلگو دیشم کو اقتدار میں لایا تھا ۔ لکشمی پاروتی سے ان کی دوسری شادی ارکان خاندان کو پسند نہیں آئی کہا جاتا ہے کہ اس وقت لکشمی پاروتی کی حکومت اور پارٹی امور میں مداخلت بڑھ گئی تھی جس کے خلاف ان کے ارکان خاندان ، بیٹے اور دامادوں نے این ٹی آر کے خلاف بغاوت کرتے ہوئے انہیں اقتدار سے بیدخل کردیا تھا ۔ چیف منسٹر اور پارٹی صدارت پر فائز ہونے والے چندرا بابو نائیڈو نے این ٹی آر سے تلگو دیشم اور پارٹی کا انتخابی نشان سیکل بھی چھین لیا تھا ۔ 1999 کے عام انتخابات میں این ٹی آر نے این ٹی آر تلگو دیشم پارٹی تشکیل دیتے ہوئے مقابلہ کیا تھا مگر اس مرتبہ وہ کامیاب نہیں ہوئے اور اسی صدمے میں ان کا انتقال ہوگیا ۔ تلگو دیشم کے رکن اسمبلی اور آنجہانی این ٹی آر کے فرزند فلم اسٹار بالا کرشنا نے اپنے والد این ٹی آر پر فلم بنانے کا اعلان کیا ہے ۔ جس پر ان کی سوتیلی ماں این ٹی آر کی بیوہ لکشمی پاروتی نے ان کے آنجہانی شوہر پر فلم بنانے کا خیر مقدم کرتے ہوئے کہا کہ فلم میں چندرا بابو نائیڈو کو ہیرو اور انہیں ( لکشمی پاروتی ) کو ویلن بتایا گیا تو وہ ہرگز برداشت نہیں کریں گی ۔ فلم میں این ٹی ار کے صرف اچھے کارناموں کو بتانا کافی نہیں ہے بلکہ این ٹی آر کے ساتھ چندرا بابو نائیڈو نے جو زیادتی کی ہے ان کی پیٹھ میں خنجر گھونپا ہے اس کو بھی پیش کرنا چاہئے بصورت دیگر وہ ان کے پاس موجود ثبوت کے ساتھ عدالت سے رجوع ہوجائیں گی ۔۔

TOPPOPULARRECENT