Thursday , October 19 2017
Home / Top Stories / این ڈی اے دورحکومت میں امید نے ناامیدی کی جگہ لے لی

این ڈی اے دورحکومت میں امید نے ناامیدی کی جگہ لے لی

یو پی کے مقررہ چار عام جلسوں میں سے پہلے جلسہ عام سے وزیراعظم نریندر مودی کا خطاب

سہارنپور ۔ 26 مئی (سیاست ڈاٹ کام) وزیراعظم نریندر مودی نے آج کہا کہ ترقی کا رجحان اور امید نے ملک میں این ڈی اے دورحکومت کے دوران ناامیدی کی جگہ لے لی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ان کی حکومت غریبوں اور کاشتکاروں کی خدمت کیلئے وقف ہے اور اس نے سرکاری خزانے کی ’’لوٹ‘‘ کا انسداد کردیا ہے۔ آئندہ سال کے اسمبلی انتخابات سے قبل یو پی میں وزیراعظم نریندر مودی چار عام جلسوں سے اپنی حکومت کی سالگرہ کے سلسلہ میں خطاب کریں گے۔ انہوں نے پہلے جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے اپنے آپ کو ’’یوپی والا‘‘ قرار دیا اور کہا کہ وہ کاشتکاروں کی مدد کے پابند ہیں۔ انہوں نے اور ان کی حکومت نے نیشکر کے کاشتکاروں کے بقایا جات کی ادائیگی میں مدد کرنے کیلئے مسلسل کئی اقدامات کئے ہیں جبکہ دیگر حکومتوں کو ان کی فکر ہی نہیں تھی۔ انہوں نے یاد دہانی کی کہ وہ بی جے پی زیرقیادت این ڈی اے حکومت کے قائد منتخب کئے گئے ہیں جبکہ انہوں نے لوک سبھا انتخابات میں کامیابی حاصل کی تھی۔ انہوں نے کہا کہ اگر آپ ہمارے دو سالہ کاموں کا جائزہ لیں تو آپ کو نظر آئے گا کہ غربت سے مقابلے کیلئے غریبوں کو بااختیار بنانے کا فیصلہ دوسروں سے مختلف تھا۔

ہم نے غریبوں کو غربت کا مقابلہ کرنے اور اسے شکست دینے کیلئے طاقتور بنایا ہے۔ ترقی کے بارے میں انہوں نے کہا کہ تمام مسائل کا حل ترقی ہے۔ دیگر افراد انتخابات میں کامیابی کیلئے اور ووٹ بینک سیاست کے تحت ترقی کی باتیں کرتے ہیں لیکن این ڈی اے نے جسے عدم رواداری کے الزامات کی بناء پر تنقید کا سامنا ہے۔ اپنے تیقنات کو صحیح کر دکھایا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ان کا ضمیر مطمئن ہے اور وہ سماج کے تمام طبقات کو مساوی ترقی دینا چاہتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ پارٹی درحقیقت ’’وکاس پارٹی‘‘ کہلانے کی مستحق ہے۔ انہوں نے کہا کہ گذشتہ دو سال کے اندر حکومت نے تیز ترین رفتار سے ترقی کی ہے جبکہ دیگر کئی افراد کا خیال تھا کہ ہندوستان ڈوب گیا ہے۔سابق حکومتوں پر پکوان گیس کنکشنوں کے سلسلہ میں تنقید کرتے ہوئے مودی نے کہا کہ اسے پہلے مالدار آدمیوں کے استعمال کی چیز سمجھا جاتا تھا لیکن ان کی حکومت نے 3 کروڑ غریب خاندانوں میں پکوان گیس کنکشن تقسیم کئے ہیں اور آئندہ 3 سالوں میں مزید 5 کروڑ پکوان گیس کنکشن دیئے جائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ ان کی حکومت نے 1.25 لاکھ کروڑ روپئے سے زیادہ رقم 3.25 کروڑ ایسے خاندانوں میں مدرا قرض اسکیم کے تحت تقسیم کی ہے اور غریبوں کو بااختیار بنایا ہے۔ انہوں نے کہا کہ وہ ان سے درخواست کرتے ہیں کہ ممکنہ حد تک پانی کی بچت کریں۔

TOPPOPULARRECENT