Thursday , August 24 2017
Home / شہر کی خبریں / ایڈیشنل ایس پی ، ورنگل لوک سبھا کیلئے ٹی آرایس کے امیدوار متوقع

ایڈیشنل ایس پی ، ورنگل لوک سبھا کیلئے ٹی آرایس کے امیدوار متوقع

ٹی آر ایس قائدین میں اختلافات پر چیف منسٹر کے سی آر کا فیصلہ ، قائدین سے مشاورت
حیدرآباد ۔ 26 ۔ اگست (سیاست  نیوز) حلقہ لوک سبھا ورنگل کیلئے ٹی آر ایس نے امیدوار کے انتخاب کیلئے چیف منسٹر کی سطح پر مشاورت کا آغاز کردیا ہے۔ پارٹی کے باوثوق ذرائع نے بتایا کہ اس حلقہ سے پارٹی امیدوار کی کامیابی کو یقینی بنانے کیلئے چیف منسٹر نے سینئر قائدین کے ساتھ مشاورت کی۔ بتایا جاتاہے کہ اس نشست کیلئے پارٹی میں بڑھتی دعویداری کو دیکھتے ہوئے چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے پولیس کے ایک اعلیٰ عہدیدار کو اس حلقہ سے امیدوار بنانے کا من بنایا ہے۔ ذرائع نے بتایا کہ ورنگل ضلع میں طویل عرصہ تک خدمات انجام دینے کے بعد حیدرآباد میں تعینات کئے گئے ایڈیشنل ایس پی رتبہ کے عہدیدار کو ٹی آر ایس میدان میں اتارنے کی تیاری کر رہی ہے۔ اس عہدیدار نے ورنگل میں اپنی نمایاں کارکردگی کے ذریعہ عوام کی تائید حاصل کی تھی۔ بتایا جاتاہے کہ پارٹی قائدین نے امیدواری کے مسئلہ پر اختلافات کو دیکھتے ہوئے  سینئر قائدین نے مذکورہ پولیس عہدیدار کے نام کی سفارش کی ہے۔ یہ عہدیدار ٹی آر ایس حلقوں سے کافی قریب مانے جاتے ہیں۔ بتایا جاتا ہے کہ محکمہ پولیس نے مذکورہ عہدیدار کی کارکردگی دیگر عہدیداروں کے مقابلہ  میں نمایاں اور بہتر ہے۔ 1989 ء بیاچ سے تعلق رکھنے والے اس عہدیدار نے کئی عہدوں پر خدمات انجام دی۔ اگر اس عہدیدار کے نام پر اتفاق رائے پیدا ہوجائے گا تو یہ عہدیدار طویل رخصت حاصل کرتے ہوئے انتخابی میدان میں ٹوٹ پڑیں گے۔ ورنگل لوک سبھا حلقہ کی نشست کیلئے پارٹی کے کئی سینئر قائدین نے اپنی دعویداری پیش کی ہے۔ انتخابات سے قبل ٹی آر ایس میں شمولیت اختیار کرنے والی کونڈہ سریکھا نے اس حلقہ کیلئے اپنے شوہر کونڈہ مرلی کے نام کی سفارش کی ہے۔ سابق ڈپٹی چیف منسٹر ڈاکٹر راجیا بھی اس حلقہ سے مقابلہ کے خواہاں ہیں۔ حالیہ عرصہ میں کانگریس اور تلگو دیشم کی جانب سے حکومت کے خلاف مہم میں شدت کو دیکھتے ہوئے ٹی آر ایس کسی غیر سیاسی شخص کو میدان میں اتارنے پر  غور کر رہی ہے۔ بائیں بازو کی جماعتیں انقلابی شاعر اور گلوکار غدر کو اپنے مشترکہ امیدوار کے طور پر میدان میں اتارنے کی تیاری میں ہے۔ اگر غدر بائیں بازو جماعتوں کی اس پیشکش کو قبول کرلیں گے تو امکان ہے کہ کانگریس پا رٹی ان کی تائید کرے گی۔ اس طرح ورنگل لوک سبھا حلقہ کا ضمنی چناؤ ٹی آر ایس کیلئے کسی چیالنج سے کم نہیں۔

TOPPOPULARRECENT