Thursday , August 17 2017
Home / Top Stories / ایکواڈور میں تباہ کن زلزلہ ، 235 ہلاک

ایکواڈور میں تباہ کن زلزلہ ، 235 ہلاک

کوئیٹو ۔ /17 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) لاطینی امریکی ملک ایکواڈور میں آج 7.8 شدت کے ایک تباہ کن زلزلے میں کم سے کم 235 افراد ہلاک ہوگئے ۔ کئی عمارتیں اور پل کھنڈر میں تبدیل ہوگئے ۔ خوفزدہ عوام اپنی جان بچانے کیلئے گھر چھوڑ کر سڑکوں پر نکل آگئے اور ادھر ادھر دوڑنے لگے ۔ ایکواڈور کے نائب صدر جورج گلوس نے ہلاکتوں میں مزید اضافہ کا اندیشہ ظاہر کرتے ہوئے اس زلزلہ کو کئی دہائیوں کے سب سے بدترین المیہ قرار دیا ۔ یہ زلزلہ ایکواڈور کے علاوہ شمالی پیرو اور جنوبی کولمبا میں رات 11 بجکر 58 منٹ پر ہوا اور تقریباً ایک منٹ تک ارتعاش جاری رہا ۔ دارالحکومت کوئیٹہ ہفتہ کی شب اس زلزلے سے دہل گیا ۔ ایک انتہائی خوفزدہ مقامی خاتون 60 سالہ ماریا توریز نے کہا کہ ’’میرے خدا ! یہ ایک انتہائی بڑا اور طاقتور زلزلہ تھا جو میں اپنی ساری زندگی میں پہلی مرتبہ دیکھی ہوں ۔ کافی وقت تک جھٹکوں اور ارتعاش کا سلسلہ جاری تھا اور میں خود کو بیہوش محسوس کررہی تھی ‘‘ ۔ توریز نے مزید کہا کہ میں باہر چلے جانا چاہتی تھی ۔ سڑکوں پر نکلنے کی کوشش کی لیکن نہیں جاسکی ‘‘ ۔ نائب صدر جارج گلاس نے کہا کہ 235 ہلاکتوں کی توثیق ہوچکی ہے ۔ 1500افراد زخمی ہوئے ہیں ۔

انہوں نے ٹیلی ویژن اور ریڈیو کے ایک خصوصی نشریہ میں کہا کہ ’’ہم جانتے ہیں کہ اب بھی کئی شہری ملبہ میں پھنسے ہوئے ہیں ۔ جنہیں بچانے کی ضرورت ہے ‘‘ ۔ اس دوران حکام نے چھ بدترین متاثر صوبوں میں ایمرجنسی ناقد کرنے کا اعلان کیا ہے ۔ جورج گلاس نے کہا کہ فوج ، پولیس اور ایمرجنسی ٹیموں کو امداد و راحت رسانی کی مہم پر بھیج دیا گیا ہے ۔ شہریوں کی جان بچانے کیلئے اعظم ترین چوکسی اختیار کی جارہی ہے ۔ ایکواڈور کے صدر رفائیل کوریا نے جو فی الحال ویٹکن کے دورہ پر ہیں ۔ ٹوئیٹر پر لکھا کہ وہ فی الفور اپنے ملک واپس ہورہے ہیں ۔ ایکواڈور زلزلوں کے لئے مخدوش ہے ۔ جہاں مارچ 1987 ء میں ایسے ہی ایک قیامت خیز زلزلے میں 1000 افراد ہلاک ہوگئے تھے اور آبادیاں کھنڈرات میں تبدیل ہوگئی تھیں ۔

TOPPOPULARRECENT