Wednesday , October 18 2017
Home / شہر کی خبریں / ایک لاکھ گھروں کو پائپ لائین سے گیس فراہمی

ایک لاکھ گھروں کو پائپ لائین سے گیس فراہمی

پانچ سال میں ڈھائی لاکھ گھروں تک وسعت : دھرمیندر پردھان
حیدرآباد 5 جون ( آئی این این ) مرکزی وزیر پٹرولیم دھرمیندر پردھان نے کہا کہ حیدرآباد میں تقریبا 2.5 لاکھ گھروں کو آئندہ پانچ سال میں  پائپ لائین کے ذریعہ گیس فراہم کی جائیگی ۔ یہاں ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے مرکزی وزیر نے کہا کہ بھاگیہ نگر گیس لمیٹیڈ کی جانب سے فی الحال 1140 صارفین کو پائپ لائین کے ذریعہ گیس سربراہی کی جائیگی ۔ انہوں نے کہا کہ آئندہ دو سال میں ایک لاکھ صارفین کو گیس پائپ لائین سے مربوط کیا جائیگا اور آئندہ پانچ سال میں 2.5 لاکھ صارفین کو پائپ لائین کے ذریعہ گیس سربراہ کی جائیگی ۔ دھرمیندر پردھان نے مطلع کیا کہ کرشنا ۔ گوداوی طاس میں امکان ہے کہ آئندہ پانچ تا سات سال میں ایک لاکھ کروڑ روپئے کی سرمایہ کاری ہوسکتی ہے کیونکہ او این جی سی ‘ ریلائینس انڈسٹریز لمیٹیڈ اور جی ایس پیسی اپنی سرگرمیوں میں وسعت لانے کے منصوبوں پر عمل کر رہے ہیں۔ انہوں نے امید ظاہر کی کہ کرشنا ۔ گوداوری طاس سے ہندوستان میں ایک معاشی انقلاب آئیگا کیونکہ یہاں تیل اور گیس کے ذخائر موجود ہیں۔ انہوں نے کہا کہ سرمایہ کاری اور تیل و گیس کے ذخائرکا پتہ چلانے میں پیش آنے والی مشکلات اور چیلنجس کے باوجود یہاں زبردست صلاحیتیں موجود ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ یہاں ملک میں کئی نسلوں کو روزگار کے مواقع دستیاب ہوسکتے ہیں۔ مرکزی وزیر نے کہا کہ مرکز کی جانب سے جلدی ہی ملاورم تا راما گنڈم گیس پائپ لائین نصب کرنے کا کام مکمل کرلیا جائیگا ۔ اس کے نتیجہ میں مسائل کا شکار فرٹیلائزر کارپوریشن آف انڈیا کو بحال کرنے میں مدد مل سکتی ہے اور اس کو کرشنا ۔ گوداوری طاس سے گیس فراہم کی جاسکتی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ پرادیپ سے حیدرآباد تک انڈین آئیل کارپوریشن ریفائنری کی ایک اور پائپ لائین بھی بچھائی جا رہی ہے ۔

TOPPOPULARRECENT