Thursday , September 21 2017
Home / Top Stories / ای ۔ میل کے موجد رے ٹاملنسن کا انتقال

ای ۔ میل کے موجد رے ٹاملنسن کا انتقال

واشنگٹن ۔ 7 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) 1970ء کے دہے میں ایک امریکی پروگرامر رے ٹاملنسن جنہوں نے ای۔ میل ایجاد کیا تھا اور پیغامات روانہ کرنے کیلئے @ کے نشان کو مقبول عام بنایا تھا، ان کا آج 74 سال کی عمر میں انتقال ہوگیا۔ آنجہانی ٹاملنسن نے 1971ء میں راست الیکٹرانک پیغامات بھیجنے کا طریقہ کار ایجاد کیا تھا۔ اس ایجاد سے قبل استعمال کنندہ ایک محدود نیٹ ورک پر اپنے پیغامات صرف تحریر کرسکتے تھے۔ اس موقع پر رے ٹاملنسن کے آجر مسٹر ریتھیان نے کل ایک بیان دیتے ہوئے کہا کہ آنجہانی کو حقیقی طور پر بابائے ٹیکنالوجی کہا جاسکتا ہے کیونکہ کمپیوٹر کے ابتدائی زمانے میں انہوں نے ای ۔ میل ایجاد کیا تھا جس نے مواصلاتی دنیا میں کھلبلی مچا دی تھی۔ لوگوں کیلئے پیغام کا تبادلہ سنکڈوں اور منٹوں کا کام ہوگیا۔ مسٹر ریتھیان ایک ڈیفنس کنٹراکٹر اور الیکٹرانک کی دنیا کے بے تاج بادشاہ مانے جاتے ہیں۔ آج دنیا نے مواصلاتی طور پر جو ترقی کی ہے اس کا سہرا رے ٹاملنسن کے سر بندھتا ہے ۔اس کے باوجود آنجہانی ایک منکسرالمزاج اور فراخدل شخصیت کے مالک تھے۔ ان کے ای ۔ میل کارنامہ کیلئے انہیں ہمیشہ یاد کیا جائے گا۔ دوسری طرف کمپنی کے ایک ترجمان نے بتایا کہ ہفتہ کو ٹاملنسن کی موت واقع ہوئی لیکن اب تک موت کی وجوہات کا پتہ نہیں چلا ہے۔ ان کے انتقال پر آن لائن لاکھوں سوگواروں نے اپنے دکھ کا اظہار کیا ہے۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT