Wednesday , August 16 2017
Home / جرائم و حادثات / اے سی پی کوکٹ پلی کے ٹھکانوں پر اے سی بی دھاوے

اے سی پی کوکٹ پلی کے ٹھکانوں پر اے سی بی دھاوے

کروڑہا روپئے کے اثاثہ جات کا انکشاف ‘ بینک لاکرس کی تلاشی باقی
حیدرآباد 14 نومبر ( سیاست نیوز) محکمہ پولیس میں آئے دن رشوت اور بدعنوانیوں کے واقعات منظر عام پر آ رہے ہیں اور راشی عہدیداروں کا پردہ فاش ہو رہا ہے ۔ ایک طرف اعلی حکام پولیس کی ساکھ بہتر بنانا چاہتے ہیں تو دوسری جانب راشی عہدیدار اپنی سرگرمیاں جاری رکھے ہوئے ہیں۔ ایک سنسنی خیز واقعہ میں آج محکمہ انسداد رشوت ستانی کے عہدیداروں نے ایک اے سی پی کے گھر پر دھاوا کرتے ہوئے کروڑ ہا روپئے کی ملکیت کو بے نقاب کیا ہے ۔ کہا گیا ہے کہ اے سی بی نے اے سی پی کوکٹ پلی سنجیو راؤ کے ٹھکانوں پر ریاست کے تقریبا 8 مقامات پر بیک وقت دھاوے کئے ۔ یہ کارروائی صبح سے شام تک جاری رہی ۔ کہا گیا ہے کہ اس راشی عہدیدار کے 13 کروڑ روپئے کے غیر محسوب اثاثہ جات کا پتہ چلا ہے ۔ آج بینکس بند ہونے کے سبب بینک لاکرس کی تلاشی ممکن نہیں ہوسکی ۔ معلوم ہوا ہے کہ سنجیو راؤ نے اے سی بی کی کارروائی سے بچنے کیلئے بالکلیہ ڈرامائی انداز میں گھر میں موجود طلائی زیورات اور کثیر رقم سے بھرا بیگ کھڑکی سے نیچے پھینک دیا تھا جس پر اے سی بی کا عملہ بھی حیران رہ گیا ۔ سنجیو راؤ حشمت پیٹھ علاقہ کا ساکن ہے اور خود محکمہ پولیس میں اس کے تعلق سے کئی چہ میگوئیاں چلتی رہتی ہیں۔ یہ عہدیدار اے سی پی کوکٹ پلی بننے سے قبل خود اینٹی کرپشن بیورو میں برسر کار تھا ۔ یہ بھی معلوم ہوا ہے کہ وہ اپنی سرویس میں ایک سے زائد مرتبہ معطل ہوچکا ہے ۔ اے سی بی عہدیداروں نے اس عہدیدار کے حشمت پیٹھ میں ایک کمرشیل کامپلکس ‘ کارخانہ علاقہ میں تین فلیٹس ملگ منڈل میدک میں 36 ایکڑ 9 گنٹے زرعی اراضی ‘ شاہ میر پیٹ میں ایک فارم ہاوز ‘ ورنگل میں 44 ایکڑ 12 گنٹے اراضی ‘ دو کاریں اور 750 گرام طلائی زیورات ہونے کا پتہ چلایا ہے ۔ابھی اس عہدیدار کے بینک لاکرس کی تلاشی لینی باقی ہے جو آج بینک بند ہونے کے سبب ممکن نہ ہوسکی ۔  اے سی بی نے سنجیو راؤ کو گرفتار کرکے عدالتی تحویل میں دیدیا ہے ۔

TOPPOPULARRECENT