Monday , August 21 2017
Home / شہر کی خبریں / اے پی کو خصوصی ریاست کا درجہ ملنے کی امید پر پانی پھر گیا

اے پی کو خصوصی ریاست کا درجہ ملنے کی امید پر پانی پھر گیا

صدر اے پی کانگریس کمیٹی این رگھوویرا ریڈی کا بیان
حیدرآباد ۔ 22 ۔ اکٹوبر : ( سیاست نیوز): صدر آندھرا پردیش کانگریس کمیٹی مسٹر این رگھوویرا ریڈی نے آندھرا پردیش کے لیے وزیر اعظم کی جانب سے خصوصی ریاست کا درجہ دینے کا اعلان نہ کرنے کی سخت مذمت کرتے ہوئے 23 اکٹوبر کو سارے آندھرا پردیش میں وزیراعظم کے پتلے نذر آتش کرنے کا اعلان کیا ہے ۔ میڈیا سے بات کرتے ہوئے رگھوویراریڈی نے بتایا کہ آندھرا پردیش کے پانچ کروڑ عوام کو وزیر اعظم کی جانب سے اے پی کو خصوصی ریاست کا درجہ دینے کا اعلان کرنے کی امید تھی لیکن وزیر اعظم نے آندھرا پردیش کی عوام کو مایوس کردیا جس کی کانگریس پارٹی سخت مذمت کرتی ہے ۔ چیف منسٹر آندھرا پردیش چندرا بابو نائیڈو کی جانب سے آندھرا پردیش کو خصوصی ریاست کا درجہ دینے کا مطالبہ نہ کرنے پر بھی حیرت کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ نریندر مودی اور چندرا بابو نائیڈو آندھرا پردیش کی عوام کو دھوکہ دے رہے ہیں ۔ 2014 کے عام انتخابات میں تلگو دیشم اور بی جے پی نے ایک دوسرے سے اتحاد کرتے ہوئے آندھرا پردیش کی عوام کو یقین دلایا تھا کہ اگر انہیں اقتدار حاصل ہوتا ہے تو آندھرا پردیش کو خصوصی ریاست کا درجہ دیں گے ۔ اقتدار حاصل ہونے کے باوجود دونوں ہی قائدین نے اپنے وعدوں سے انحراف کیا ۔ رگھوویرا ریڈی نے کہا کہ صدر کانگریس سونیا گاندھی اور نائب صدر راہول گاندھی نے وزیر اعظم نریندر مودی کو مکتوبات روانہ کرتے ہوئے آندھرا پردیش کو خصوصی ریاست کا درجہ دینے کا مطالبہ کیا تھا لیکن وزیر اعظم نے اس پر کوئی توجہ نہیں دی ہے جس کی کانگریس پارٹی سخت مذمت کرتی ہے ۔۔

TOPPOPULARRECENT