Friday , March 24 2017
Home / دنیا / باغیوں پر اچانک جارحیت کے بعددمشق میں جھڑپیں

باغیوں پر اچانک جارحیت کے بعددمشق میں جھڑپیں

’’فتح الشام اور فیلاق الرحمن ‘‘کی فوج سے جنگ ‘ عباسی چوراہے کی سمت پیشرفت
بیروت۔19مارچ ( سیاست ڈاٹ کام) دمشق کا مشرقی ضلع باغیوں اور جہادیوں کی اچانک جارحیت کے بعد جھڑپوں سے دہل کر رہ گیا ۔ باغیوں نے سرکاری افواج پر حملے کئے ۔ باغی اور اُن کے اتحادی جہادیوں نے جن کی قیادت القاعدہ کی سابق ملحق تنظیم فتح الشام کررہی تھی ۔ انہوں نے سرکاری مورچوں پر جُلا جوبر میں حملہ کیا اور پڑوسی عباسی چوراہے کی سمت پیشرفت کی ۔ شامی رصدگاہ برائے انسانی حقوق کے سربراہ رامی عبدالرحمن نے کہا کہ باغیوں اور جہادیوں نے سرکاری فوجوں کو دو کار بم دھماکوں اور خودکش حملوں کا نشانہ بنایا ۔ برطانیہ میں قائم رصدگاہ فوری طور پر جھڑٖوں میں ہلاک ہونے والوں کی تعداد کا انکشاف نہیں کرسکی ۔جوبر پر قبضہ کے لئے گذشتہ دو سال سے زیادہ عرصہ سے یہ علاقہ میدان جنگ بنا ہوا ہے ۔ یہ علاقہ باغیوں اور ان کے اتحادی جہادیوں اور سرکاری افواج کے درمیان جنگ کی وجہ بن گیا ہے ۔ شام کے سرکاری ٹی وی کی اطلاع کے بموجب فوج نے دہشت گردوں کے حملوں کو توپ خانہ سے فائرنگ کے ذریعہ ناکام بنادیا ۔ مقامی شہریوں سے اپنے گھروں تک محدود رہنے کی خواہش کی گئی ۔ عباسی چوراہے کی جھلکیاں ٹی وی پر دکھائی گئیں جہاں عوام کا ہجوم تھا ۔ صرف شلباری کی آوازیں سنائی دے رہی تھی لیکن خالی جگہ کہیں بھی نظر نہیں آتی تھی ۔ دمشق میں اخباری نمائندوں نے کہا کہ فوجیوں نے عباسی چورہے کو جانے والی تمام سڑکوں کی ناکہ بندی کردی ہے اور پورے شہر میں دھماکوں کی آوازیں سنائی دے رہی ہیں ۔ کئی اسکولوں نے پیر تک تعلیمی ادارے بند کردینے کا اعلان کیا ہے ۔ شہری فائرنگ اور شلباری کی زد میں آنے کے خوف سے اپنی قیامگاہوں تک محدود ہیں ۔ رصدگاہ کے بموجب اسلامی فیلاق الرحمن باغی گروپ اور فتح الشام محاذ جسے قبل ازیں النصرہ محاذ کہا جاتا تھا القاعدہ سے اپنے تعلقات منقطع کرنے کے بعد اپنا نام تبدیل کرچکا ہے اور جوبر میں موجود ہے ۔ پڑوسی علاقہ انتہائی اہم محاذ بن گیا ہے کیونکہ یہ دارالحکومت کے قلب میں باغیوں کے مورچوں سے بہت قریب ہے ۔ سرکاری افواج عرصہ سے باغیوں کو پسپا کرنے کی کوشش میں مصروف ہیں کیونکہ دمشق کے قلب کے قریب ان کا مورچہ قائم ہیں لیکن آج کے حملہ کے بعد باغیوں نے جو بر میں دفاعی موقف اختیار کرلیا ہے ۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT