Saturday , August 19 2017
Home / Top Stories / باغیوں کے کنٹرول والے شامی شہر پر فضائی حملے ۔ 8 افراد ہلاک

باغیوں کے کنٹرول والے شامی شہر پر فضائی حملے ۔ 8 افراد ہلاک

بیروت 14 جنوری ( سیاست ڈاٹ کام ) شمال مغربی شام میں باغیوں کے کنٹرول والے ایک شہر پر کئے گئے فضائی حملوں میں کم از کم آٹھافراد ہلاک ہوگئے ہیں۔ حقوق انسانی کے ایک گروپ نے آج یہ بات بتائی ۔ اس علاقہ میں یہ تازہ ترین فوجی کارروائی تھی جہاںالقاعدہ کے سابق ارکان کی کثیر تعداد موجود رہنے کا شبہ ہے ۔ کہا گیا ہے کہ صوبہ ادلیب کے ٹاؤن معارت مسرین میں جو لوگ ہلاک ہوئے ہیں ان میں اکثریت عام شہریوں کی ہے ۔ حقوق انسانی سے متعلق شامی گروپ نے یہ بات بتائی ۔ واضح رہے کہ قریبی شہر اورم الجوز میں کل رات دیر گئے ایک فضائی حملہ ہوا تھا اور اس حملے میں تین عام شہری ہلاک ہوگئے تھے جن میں ایک کمسن بچہ بھی شامل تھا ۔ حقوق انسانی گروپ کے سربراہ رامی عبدالرحمن نے یہ بات بتائی ۔ انہوں نے کہا کہ یہ حملے روسی یا شامی حکومت کے طیاروں کی جانب سے کئے گئے ہیں۔ امریکی زیر قیادت اتحاد نے بھی  ادلیب صوبہ میں اپنے نشانوں پر حملے کئے تھے ۔ حقوق انسانی گروپ کا کہنا ہے کہ جن طیاروں نے یہ حملے کئے ہیں ان کے انداز ‘ مقام اور پرواز کو دیکھتے ہوئے اور ان حملوں میں جو اسلحہ استعمال کئے گئے ہیں ان کو دیکھتے ہوئے یہ شبہات ظاہر کئے جا رہے ہیں کہ یہ حملے شامی یا روسی طیاروں نے کئے ہیں۔ واضح رہے کہ 30 ڈسمبر کو بشارالاسد حکومت کے حلیف روس اور باغیوں کے حلیف ترکی کی کوششوں کے نتیجہ میں جو جنگ بندی نافذ ہوئی ہے اس کے نتیجہ میں ملک کے بیشتر حصوں میں امن و سکون کی فضا دکھائی دے رہی ہے ۔ جنگ بندی کے معاہدہ میں سابقہ القاعدہ حمایتی گروپ فتح الشام اور اس کا مخالف گروپ داعش شامل نہیں ہیں۔ ادلیب صوبہ میں بیشتر علاقہ پر باغیوں کا اتحاد قابض ہے جسے فاتح گروپ قرار دیا جاتا ہے ۔ اس گروپ پر فتح الشام کا غلبہ ہے ۔ جنگ بندی کا اثر تاہم باغیوں کے کنٹرول والے وادی برادا ضلع میں کوئی اثر نہیں دیکھا گیا جو شمال مشرقی دمشق میں واقع ہے ۔

TOPPOPULARRECENT