Sunday , September 24 2017
Home / سیاسیات / بانی آئی ٹی شعبہ بی جے پی پرودیوت بورا مستعفی

بانی آئی ٹی شعبہ بی جے پی پرودیوت بورا مستعفی

وزیراعظم اور صدر بی جے پی کے اندازِ کارکردگی پر تنقید
نئی دہلی۔ 12 ستمبر (سیاست ڈاٹ کام) حکومت اور پارٹی میں جمہوری روایات کی اہمیت ختم کرنے پر مایوس نوجوان بی جے پی قائد آسام پرو دیوت بورا پارٹی سے مستعفی ہوگئے۔ انہوں نے پارٹی میں آئی ٹی شعبہ کی بنیاد ڈالی تھی۔ انہوں نے کہا کہ پارٹی مختلف پارٹی نہیں رہی۔ پاگل پن کی گرفت میں ہے۔ کسی بھی قیمت پر جیتنے کے جنون نے پارٹی کے اقدار کو تباہ کردیا ہے۔ یہ 2004ء کی وہ پارٹی نہیں ہے، جس میں وہ شریک ہوئے تھے۔ انہوں نے اپنا استعفیٰ صدر بی جے پی امیت شاہ کو روانہ کردیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ بی جے پی سے وہ موجودہ قیادت کے تحت مایوس ہوچکے ہیں۔ حکومت کو مختلف انداز کے سیاسی متبادل کی ضرورت ہے۔ اب یہ بی جے پی کی ذمہ داری ہے کہ اسے عوام منتخب کرتے ہیں یا نہیں۔ بورا نے کہا کہ حالانکہ انہیں آسام کانگریس ، عام آدمی پارٹی اور اے جی پی سے شمولیت کی پیشکش حاصل ہوچکی ہے لیکن وہ کسی میں بھی شمولیت سے دلچسپی نہیں رکھتے۔ اپنے 4 صفحات پر مشتمل تفصیلی مکتوب میں 40 سالہ بورا نے بے چین کردینے والے سوالات نریندر مودی اور امیت شاہ کے انداز ِ کارکردگی کے بارے میں کئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ مودی نے ملک کی جمہوری روایات کو تباہ کردیا ہے۔ بحیثیت وزیراعظم وہ کابینی نظام میں سب سے آگے ہیں لیکن غیرمساوی افراد کے درمیان اولین ہیں۔ انہوں نے کہا کہ امیت شاہ نے فیصلہ سازی کے انداز کو انتہائی انفرادی رنگ دے دیا ہے۔ پارٹی کے کئی عہدیدار اختیارات سے محروم ہیں۔ کسی بھی تنظیم میں قائد کا انداز کارکردگی دوسرا کیلئے قابل تقلید ہوتا ہے۔ میں دیکھ رہا ہوں کہ ریاست میں پارٹی کی کیا وقعت ہے۔ انہوں نے کہا کہ جونیر امیت شاہ میں آپ کی قابلیت اور تکبرکم ازکم 10 واں حصہ ہونا چاہئے۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT