Wednesday , September 20 2017
Home / شہر کی خبریں / برسر عام رفع حاجت کو روکنے ای ۔ ٹائیلٹ کی تجویز

برسر عام رفع حاجت کو روکنے ای ۔ ٹائیلٹ کی تجویز

گوگل میاپ سے بیت الخلاؤں کی نشاندہی، جی ایچ ایم سی کا ملک گیر سطح کا منفرد اقدام
حیدرآباد۔15جنوری (سیاست نیوز) حیدرآباد میں گوگل میاپ کے ذریعہ عوامی بیت الخلاء کا پتہ چلایا جا سکے گا۔ مجلس بلدیہ عظیم ترحیدرآباد کی جانب سے جاریہ ماہ کے اواخر میں شروع کئے جانے والے عصری بیت الخلاء کے منصوبہ کے ساتھ بلدیہ نے گوگل میاپ پر بیت الخلاء کی مسافت اور نشاندہی کو پیش کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ بتایا جاتا ہے کہ دونوں شہروں میں دہلی اور مدھیہ پردیش کے طرز پر حکومت کی جانب سے گوگل میاپ کے ذریعہ بیت الخلاء کا پتہ بتانے اور نشاندہی کرنے کیلئے نقشہ پیش کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ جی ایچ ایم سی کی جانب سے شہر میں عصری بیت الخلاء کا منصوبہ 20جنوری سے شروع ہونے جا رہا ہے اس کے ساتھ ساتھ بیت الخلاء کا پتہ جاننے کے لئے ڈیجیٹل طریقہ اختیار کرنے کی سہولت فراہم کرنے کا منصوبہ بھی تیار کیا جارہا ہے۔عہدیداروں کے بموجب دونوں شہروں میں 450ای۔ٹائلیٹ کی تنصیب کا منصوبہ تیار کیا گیا ہے اور اس 450ای۔ٹائلیٹ کی جگہوں کی نشاندہی کرتے ہوئے یہ تفصیلات گوگل کے حوالے کی جائیں گی اور گوگل میاپ میں ان تمام تفصیلات کو درج کرتے ہوئے عوام کیلئے پیش کیا جائے گا۔دونوں شہروں میں برسر عام رفع حاجت کے کو روکنے کیلئے کئے جانے والے اقدامات کے تحت کی جانے والی کاروائیوں کے دوران حکومت اور مجلس بلدیہ عظیم تر حیدرآباد کی جانب سے کیا جانے والا یہ اقدام ملک میں منفرد ہوگا کیونکہ ملک کے دو شہروں میں تاحال یہ طریقہ کار اختیار کیا گیا ہے اور حکومت ادعا ہے کہ یہ طریقہ کار کارآمد ثابت ہوا ہے جس کے سبب حیدرآباد میں یہ طریقہ اختیار کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ دونوں شہروں میں موجود 450عوامی بیت الخلاء کے گوگل میاپ پر آجانے کے بعد موبائیل کے ذریعہ بیت الخلاء تک پہنچنے کا راستہ معلوم کیا جا سکتا ہے ۔ بتایا جاتا ہے کہ جی ایچ ایم سی کی جانب سے ای۔ٹائیلیٹ کا تجربہ کامیاب ہونے کی صورت میں ہر 2کیلو میٹر پر ایک ای ۔ ٹائیلیٹ کی تنصیب کو یقینی بنانے کے اقدامات کئے جانے کا منصوبہ تیار کیا جا رہا ہے۔

TOPPOPULARRECENT