Friday , September 22 2017
Home / دنیا / برطانیہ میں آئی ایس آئی ایس اکیڈیمی انتظامیہ نام بدلنے پر مجبور

برطانیہ میں آئی ایس آئی ایس اکیڈیمی انتظامیہ نام بدلنے پر مجبور

لندن ۔ 9 فبروری (سیاست ڈاٹ کام) برطانیہ میں ایک اسکول جس کا نام ’’آئی ایس آئی ایس اکیڈیمی‘‘ ہے، کو اپنا نام تبدیل کرنے پر مجبور ہونا پڑا کیونکہ آئی ایس آئی ایس دولت اسلامیہ کا بھی نام ہے اور مذکورہ اکیڈیمی کے بارے میں لوگوں نے مضحکہ اڑانا شروع کردیا اور خوفزدہ ہونے لگے تھے کہ کہیں مذکورہ اکیڈیمی میں دہشت گردوں کو تو تیار نہیں کیا جارہا؟ آکسفورڈ میں واقع اس اسکول کا نام تین سال قبل آئی ایس آئی ایس اکیڈیمی رکھا گیا تھا جو دریائے ٹیمز کے قریب واقع ہے۔ بہرحال عوامی اعتراضات پر اب اس اکیڈیمی کا نام بدل کر ایفلی اکیڈیمی رکھا گیا ہے تاکہ لوگوں میں دولت اسلامیہ کے نام کو لیکر غلط فہمی نہ ہوسکے۔ آن لائن پرانے نام پر کافی تنقیدیں کی جارہی تھیں۔ ہیڈ ٹیچر کے ویلیٹ نے اکیڈیمی کا نام بدلنے کا فیصلہ اس وقت کیا جب آن لائن انہوں نے دیکھا کہ تنقید کرنے والے اکیڈیمی کے طلباء کی تصاویر کا استعمال کرتے ہوئے انہیں مستقبل کا دہشت گرد قرار دے رہے تھے۔ انہوں نے کہا کہ ہر ایسا شخص جو اسکولی نصاب کی نوعیت سے واقف نہیں ہے، اسے بھی اسکول کا نام سن کر سکتہ طاری ہوجاتا تھا اور وہ صرف ’’اوہ … کہہ کر خاموش ہوجاتا تھا۔ اکیڈیمی (اسکول) میں طلباء کی جملہ تعداد 132 ہے جو کسی نہ کسی جسمانی یا دماغی نقص کا شکار ہیں۔ قبل ازیں بھی اسے ایفلی اسکول کے نام سے جانا جاتا تھا تاہم تین سال قبل اس کا نام تبدیل کرکے آئی ایس آئی ایس رکھا گیا تھا۔

TOPPOPULARRECENT