Sunday , September 24 2017
Home / شہر کی خبریں / برقی سربراہی کو موثر بنانے پرانے شہر میں فیوز آف کال سنٹرس

برقی سربراہی کو موثر بنانے پرانے شہر میں فیوز آف کال سنٹرس

جناب میر کمال الدین علی خاں ڈائرکٹر ایچ آر ٹی ایس پی ڈی سی ایل کا بیان
حیدرآباد 20 نومبر (سیاست نیوز) پرانے شہر میں برقی سربراہی کو بہتر بنانے کے علاوہ فیوز آف کال کی سہولت میں اضافہ کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ تلنگانہ اسٹیٹ سدرن پاور ڈسٹری بیوشن لمیٹیڈ نے آج پرانے شہر کے علاقوں میں مزید پانچ فیوز آف کال سنٹرس کے قیام کو منظوری دے دی ہے۔ بتایا جاتا ہے کہ فی الحال دونوں شہروں حیدرآباد و سکندرآباد کے 28 سیکشنس میں 24 فیوز آف کالس سنٹرس موجود تھے جن میں مزید 5 کا اضافہ کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے تاکہ برقی سربراہی منقطع ہونے کی صورت میں فوری طور پر بحالی کے اقدامات کئے جاسکیں جس سے عوام کو سہولت حاصل ہوگی۔ جناب میر کمال الدین علی خان ڈائرکٹر ایچ آر ٹی ایس ایس پی ڈی سی ایل نے بتایا کہ 5 نئے فیوز آف کال سنٹرس سعیدآباد، یاقوت پورہ، مغل پورہ، عطا پور حیدر گوڑہ اور دتاتریہ نگر کے لئے منظور کئے گئے ہیں تاکہ اِن علاقوں میں بروقت برقی سربراہی بحال کرنے اقدامات یقینی بنائے  جاسکیں۔ منظورہ فیوز آف کالس سنٹرس 24 گھنٹے خدمات انجام دیں گے اور ان کے لئے مرکزی کال سنٹر سے احکامات کی اجرائی کے علاوہ ڈیویژنل سطح پر اِن کالس سنٹرس کو شکایات کے متعلق اطلاعات فراہم کی جائیں گی۔ اُنھوں نے بتایا کہ پرانے شہر میں برقی سربراہی نظام کو بہتر بنانے کے لئے 3 سب اسٹیشنس کی تعمیر بھی منظوری کے مراحل میں پہونچ چکی ہے لیکن تاحال اراضی کی نشاندہی نہیں کی جاسکی ہے۔ 133/11kv کے 3 سب اسٹیشنس کی تجویز مجاز عہدیداروں کو روانہ کردی گئی ہے جوکہ ٹرانسکو کی جانب سے تعمیر کئے جائیں گے۔ شہر میں موجود 28 برقی سیکشنس کے لئے اب تک 24 فیوز آف کالس سنٹرس ہوا کرتے تھے جن میں 5 کے اضافہ کے ساتھ 29 تک پہونچ چکی ہے۔ پرانے شہر میں برقی منقطع ہونے کی شکایات میں مسلسل اضافہ کو دیکھتے ہوئے کئے گئے اس فیصلہ کے متعلق جناب کمال الدین علی خاں نے بتایا کہ موجودہ سب اسٹیشنس پر اضافی بوجھ عائد ہونے کے سبب برقی سربراہی منقطع ہونے کی شکایات موصول ہورہی ہیں جنھیں دور کرنے کے لئے نئے سب اسٹیشنس کی تعمیر ناگزیر ہے۔

TOPPOPULARRECENT