Saturday , August 19 2017
Home / ہندوستان / برقی شرحوں کی نئی پالیسی کا مسودہ تیار

برقی شرحوں کی نئی پالیسی کا مسودہ تیار

آئندہ ہفتہ مرکزی کابینہ میں منظوری کی توقع
نئی دہلی ۔ 11 ۔ دسمبر : ( سیاست ڈاٹ کام ) : مرکزی کابینہ توقع ہے کہ برقی شرحوں کی نئی پالیسی کو آئندہ ہفتہ منظوری دے دیگی جس کا بنیادی مقصد ڈسکام ( تقسیم برقی کے اداروں ) کے لیے ریگولیٹری میکانزم وضع کرنا اور برقی شعبہ میں سرمایہ کاری کی حوصلہ افزائی اور قابل تجدید توانائی پر توجہ مرکوز کرنا ہے ۔ باوثوق ذرائع نے بتایا کہ وزیر اعظم کی زیر صدارت کابینہ اجلاس میں برقی شرحوں پر نظر ثانی کے لیے نئی پالیسی کو منظوری دیدی جائے گی ۔ قبل ازیں مرکزی حکومت نے الکٹریسٹی ایکٹ 2003 کے تحت برقی شرحوں کی پالیسی ( ٹیرف ) کو 2006 میں منظور کیا تھا اور اب وزارت توانائی نئی پالیسی کی کابینہ سے منظوری کے لیے ممکنہ کوشش میں ہے ۔ وزیر توانائی مسٹر پیوش گوئیل نے بتایا کہ نئی پالیسی ، تحفظ ماحولیات اور قابل تجدید توانائی کا آئنہ دار ہوگی اور برقی شعبہ میں سرمایہ کاری کی عاجلانہ منظوری کی حوصلہ افزائی کرے گی ۔ علاوہ ازیں ریگولیٹری میکانزم کو مستحکم کرنے سے ڈسکام کی کارکردگی میں تیزی اور صارفین کی خدمات میں بہتری آجائے گی ۔ انہوں نے کہا کہ سابقہ پالیسی میں جن مسائل کو نظر انداز کردیا گیا تھا اب انہیں نئی پالیسی میں شامل کرلیا جائیگا ۔ وزیر توانائی نے مزید بتایا کہ نیو ٹیرف پالیسی برقی پیداوار اور قابل تجدید توانائی کے شعبہ میں ایک نئی جست لگائے گی تاکہ ماحولیات کے تحفظ کو یقینی بنایا جاسکے ۔۔

TOPPOPULARRECENT