Thursday , August 17 2017
Home / Top Stories / برقی و پانی کی قلت دور کرنے ٹھوس اقدامات

برقی و پانی کی قلت دور کرنے ٹھوس اقدامات

کاکتیہ پاور پراجکٹ ۔ 2 کا افتتاح ، چیف منسٹر چندرشیکھر راؤ کا خطاب
حیدرآباد۔ 5 جنوری ۔ (سیاست نیوز ) چیف منسٹر چندرشیکھر راؤ نے ضلع ورنگل کے بھوپال پلی (چلپور ) میں 600 میگاواٹ برقی پیداوار کرنے والے کاکتیہ تھرمل پاور پراجکٹ ۔ 2 کا افتتاح کرکے اسے قوم کے نام معنون کیا ۔ اس موقع پر منعقدہ جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے چیف منسٹر نے کہاکہ ٹی آر ایس حکومت سنہرے تلنگانہ کی تعمیر میں کوئی کسر نہیں چھوڑے گی ۔ انھوں نے کہا کہ راشن کارڈ رکھنے والے ہر ایک خاندان کو کلیان لکشمی اور شادی مبارک اسکیم سے مستفید کیا جائے گا۔ بھوپال پلی حلقہ کیلئے 2000 ڈبل بیڈروم منظور کئے اور گاندھی نگر علاقہ میں پولیس بٹالین کے قیام کو بھی منظوری دی ۔ اس علاقہ کیلئے پی جی سنٹر اور پالی ٹیکنک کالج کے قیام کا مطالبہ کیا گیا ہے ۔ آج اس مطالبہ کو بھی پورا کیا جارہا ہے ۔ اس کی بھی منظوری کا سی ایم نے اعلان کیا ۔ چیف منسٹر کے چندرشیکھر راؤ نے کہاکہ تلنگانہ حکومت انتخابات کے دوران جو وعدے کئے تھے ان تمام کو مرحلہ وار سطح پر پورا کیا جارہا ہے ۔ انھوں نے کہا کہ سال 2018 ء تک 24 گھنٹے برقی سربراہ کی جائے گی ۔ ریاست میں پانی کی قلت کو دور کرنے کیلئے ٹھوس اقدامات کئے جارہے ہیں۔ محکمہ آبپاشی کے تحت 25 ہزار کروڑ روپئے مختص کئے گئے ہیں ۔ انھوں نے کہاکہ متحدہ ریاست میں تلنگانہ کے تالابوں کی دیکھ بھال کے تعلق سے لاپرواہی کا مظاہرہ کیا گیا تھا ۔ تلنگانہ حکومت نئے طریقہ سے تمام تالابوں کے مرمتی کاموں کو انجام دے رہی ہے ۔ ڈی ایم کے تحت کاکتیہ کنال کے مرمتی کاموں کو انجام دیا جائے گا ۔ دیوادولہ پراجکٹ کے تحت رامپا ، لکشاورم ، بھیم گھن پور پراجکٹ کے تحت تالابوں میں سال بھر پانی کا ذخیرہ رہنے کے اقدام بھی کئے جائیں گے ضلع میں پانی کی قلت کو دور کیا جائے گا ۔ سال میں دو مرتبہ فصلیں تیار ہوسکیں ۔ انھوں نے کہاکہ ورنگل کے عوام کو میں زندگی بھر یاد رکھوں گا ۔ علحدہ ریاست تلنگانہ کی تحریک میں یہاں کے عوام نے بھرپور ساتھ دیا تھا اور حال ہی میں منعقدہ ضمنی انتخاب میں بھی ورنگل کے عوام کی تائید قابل رشک ہے ۔ انوں نے کہاکہ تلنگانہ حکومت تمام طبقات کی ترقی چاہتی ہے ۔ ریاستی حکومت کنٹراکٹ ملازمین ، آؤٹ سورسنگ ملازمین کے دیرینہ مسائل کو حل کررہی ہے ۔ کنٹراکٹ ملازمین کو مستقل کیا جارہا ہے ۔ آؤٹ سورسنگ ملازمین کی تنخواہوں میں بھی اضافہ کا انھوں نے اعلان کیا ہے۔ انھوں نے کہاکہ سال 2019 ء تک ریاست میں فاضل برقی پیداوار کے اقدامات اُٹھائے جارہے ہیں ۔ تلنگانہ حکومت کی جانب سے اس موقع پر ڈپٹی سی ایم کڈیم سری ہری ، اسپیکر مدھو سدھن چاری جو حلقہ بھوپال پلی کی نمائندگی کرتے ہیں ایم پی ہنسوری دیاکر ، بی ونودکمار ، ضلع پریشد چیرپرسن پدما ، سی دھرما ریڈی ، جینکو چیرپربھاکر موجود تھے ۔

TOPPOPULARRECENT