Thursday , August 24 2017
Home / شہر کی خبریں / برقی کھمبوں پر کھلے فیوز باکس، شہریوں کی جان کو خطرہ

برقی کھمبوں پر کھلے فیوز باکس، شہریوں کی جان کو خطرہ

محکمہ برقی خاموش تماشائی، اموات کی مثالوں سے بے خبر، عالمی شہر کا خواب
حیدرآباد 11 مارچ (سیاست نیوز) شہر میں برقی کھمبوں پر کھلے فیوز باکس شہریوں کی جان کے لئے خطرہ بنے ہوئے ہیں۔ اس کے باوجود محکمہ برقی کی جانب سے کوئی اقدامات نہ کئے جانے سے ایسا محسوس ہوتا ہے کہ محکمہ برقی کے عہدیداروں کو شہریوں کی زندگیوں کے تحفظ کی کوئی فکر نہیں ہے۔ جاریہ ماہ کے دوران برقی شاک سے شہر میں دو افراد ہلاک ہوئے ہیں جن میں ایک پولیس جوان کے علاوہ ایک معصوم بچہ شامل ہے۔ دونوں شہروں حیدرآباد و سکندرآباد کے کئی علاقوں میں برقی کھمبوں پر موجود فیوز باکس کی حالت انتہائی ابتر ہوچکی ہے اور اس سلسلہ میں متعدد مرتبہ توجہ دہانی کے باوجود اِن باکسیس کی تبدیلی کے کوئی اقدامات نہیں کئے گئے جس کی وجہ سے اب یہ شہریوں کے لئے زندگی کا خطرہ ثابت ہونے لگے ہیں۔ پرانے شہر کے علاوہ نئے شہر کے بھی کئی علاقوں بالخصوص نامپلی، مہدی پٹنم، زیبا باغ، مراد نگر، آصف نگر، وجئے نگر کالونی میں بھی کھلے باکسیس کی وجہ سے عوام میں تشویش پائی جاتی ہے۔ گزشتہ دنوں پولیس جوان کی برقی شاک لگنے سے موت کی اطلاعات سامنے آئیں لیکن اِس سے قبل بھی عنبرپیٹ علاقہ میں ایک 12 سالہ لڑکے کی موت برقی شاک سے ہوئی تھی۔ شہر میں موجود برقی کھمبوں پر نصب کردہ فیوز باکس کو محفوظ بنانے کے لئے فوری طور پر نہ صرف محکمہ برقی بلکہ مجلس بلدیہ عظیم تر حیدرآباد کو متحرک ہوتے ہوئے اقدامات کرنے چاہئے۔ چونکہ اِن فیوز باکس میں برقی رو دوڑنے کے سبب معصوم شہری شاک لگنے سے متاثر ہورہے ہیں۔ شہر حیدرآباد کو حکومت کی جانب سے عالمی معیار کے شہروں میں تبدیل کرنے کے لئے کئی ایک اقدامات کئے جارہے ہیں لیکن جب تک شہر کو محفوظ ترین شہروں کی فہرست میں شامل نہیں کیا جاتا ، اُس وقت تک عالمی معیار کا شہر بنایا جانا ممکن نہیں ہے اِسی لئے حکومت کو محکمہ برقی کی جانب سے سربراہ کی جانے والی برقی کو محفوظ بنانے کے علاوہ دیگر سہولیات کو بہتر بنانے پر بھی توجہ مرکوز کرنی چاہئے۔ محکمہ برقی کے اعلیٰ عہدیداروں کے بموجب برقی کھمبوں پر نصب کردہ فیوز باکس کو  محفوظ بنانا متعلقہ علاقہ کے عہدیداروں اور کنٹراکٹرس کی ذمہ داری ہوتی ہے۔ اسی لئے اس مسئلہ پر راست محکمہ کو ذمہ دار قرار نہیں دیا جاسکتا لیکن جہاں کہیں سے محکمہ برقی کو غیر محفوظ فیوز باکس یا کھلے برقی تار کی اطلاعات و شکایات موصول ہوتی ہیں تو فوری طور پر کارروائی کرتے ہوئے اقدامات کئے جاتے رہے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT