Monday , September 25 2017
Home / Top Stories / برکینافاسو کی ہوٹل پر حملہ میں ہلاکتوں کی تعداد29ہوگئی

برکینافاسو کی ہوٹل پر حملہ میں ہلاکتوں کی تعداد29ہوگئی

OUAGADOUGOU, JAN 17:-A soldiers stands guard in front of Splendid Hotel in Ouagadougou, Burkina Faso, January 17, 2016, a day after security forces retook the hotel from al Qaeda fighters who seized it in an assault that killed two dozen people from at least 18 countries and marked a major escalation of Islamist militancy in West Africa. REUTERS/UNI-30R

10غیر ملکی شہری بھی شامل ‘ تین گھنٹے طویل جھڑپ ‘ فرانس کی خصوصی فوج کی امداد
اواگاڈوگو۔17جنوری ( سیاست ڈاٹ کام )  برکینا فاسوکی ایک اعلیٰ سطحی ہوٹل پر القاعدہ کے حملہ میں ہلاک ہونے والوں کی تعداد 29ہوگئی ‘ جن میں 10 غیر ملکی بھی شامل ہیں ۔  یہ حملہ جس کی ماضی میں کوئی مثال نہیں ملتی ۔ جہادیوں کی علاقائی رسائی میں اضافہ کا ثبوت ہے ۔ کئی گھنٹوں طویل جھڑپ میںبرکینا فاسو کے فوجیوں نے حصہ لیا جنہیں فرانسیسی خصوصی فوج کی مدد حاصل تھی ۔ عسکریت پسندوں میں دو خواتین بھی شامل تھیں جو فوراسٹار اسپلینڈڈ ہوٹل میں زبردستی داخل ہوگئے تھے ۔ یہ ہوٹل غیر ملکیوں اور اقوام متحدہ کے ارکان عملہ کا پسندیدہ ہوٹل ہے ۔ ان دہشت گردوں نے 100سے زیادہ افراد کو یرغمال بنالیا تھا ۔ برکینا فاسو میں حملہ کے بعد تین روزہ قومی سوگ کا اعلان کیا ہے جس سے ظاہر ہوتا ہے کہ پڑوسی ملک میں مالی کے ایک پُرتعیش ہوٹل پر بھی القاعدہ نے حملہ کیا تھا جہاں 20 افراد جن میں سے بیشتر غیر ملکی تھے ہلاک ہوگئے تھے ۔ برکینا فاسو کی قوم صدمہ کی حالت میں ہیں ۔ صدر روچ مارک کرسچین کبور نے جو گذشتہ ماہ اس عہدہ پر فائز ہوئے ہیں ریڈیو ٹی وی پر قوم سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ تاریخ میں پہلی بار ہمارا ملک سلسلہ وار بربریت اور دہشت گردی کے حملوں کا شکار ہوا ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ برکینافاسو کے عوام فاتح بن کر ابھرے ۔ حملہ کا آغاز جمعہ کی شام 7:45بجے ہوا تھا جب کہ متعدد حملہ آور 147 کمروں والے اسپلینڈڈ ہوٹل میں زبردستی داخل ہوگئے تھے ۔ اخباری نمائندوں سے تین بندوق برداروں کو جو شملے باندھے ہوئے تھے قوام کروما کے مقام پر فائرنگ کرتے دیکھا ۔یہ شہر کی ایک شاہراہ ہے ۔ ایک اور عینی شاہد کے بعد حملہ آوروں کی تعداد چار تھی ۔ ہوٹل اور اس کا مضافاتی علاقہ میدان میںجنگ میں تبدیل ہوگیا تھا ۔ برکینا فاسو کے فوجی جنہیں فرانسیسی فوج کی تائید حاصل تھی وہ اس علاقہ میں تعینات ہیں ‘ تاکہ دہشت گردی کے کسی بھی اقدام کا انسداد کیا جاسکے ۔ ہوٹل کو واپس لینے کی کارروائی 2بجے شب شروع ہوئی ۔ حملہ میں جملہ 29 افراد بشمول 6 کینیڈا کے شہری ‘ دو فرانسیسی اور دو سوئٹزرلینڈ کے شہری اور ایک امریکی شہری ہلاک ہوگئے ۔ وزیرداخلہ سائمن کمفورٹ نے کہا کہ تین کمسن جہادیوں کی نعشیں بھی دستیاب ہوئی ہیں ۔

TOPPOPULARRECENT