Tuesday , April 25 2017
Home / شہر کی خبریں / بلدیہ کے عہدیداروں کا شہر کے کئی ہوٹلوں پر دھاوا ، نامور ہوٹلوں پر بھاری جرمانے

بلدیہ کے عہدیداروں کا شہر کے کئی ہوٹلوں پر دھاوا ، نامور ہوٹلوں پر بھاری جرمانے

پرانے شہر میں بھی آئندہ ہفتہ کارروائی ، ناقص صاف صفائی اور غیر قانونی ذبیحہ گوشت استعمال کا شاخسانہ
حیدرآباد۔7اپریل (سیاست نیوز) مجلس بلدیہ عظیم تر حیدرآباد شہر کی اطراف موجود ہوٹلوں پر دھاوے کرتے ہوئے انہیں چالانات کر رہی ہے ۔ جی ایچ ایم سی کے عہدیداروں نے آج گرین باؤرچی آرام گڑھ پر دھاوا کرتے ہوئے 50ہزار روپئے کا جرمانہ عائد کیا ہے اور اس کے علاوہ شہر کے دیگر مقامات پر بھی دھاؤوں کا سلسلہ جاری ہے ۔ بتایاجاتا ہے کہ آئندہ 10اپریل سے مجلس بلدیہ عظیم تر حیدرآباد کے عہدیدار پرانے شہر میں موجود ہوٹلوں پر دھاؤوں کا سلسلہ شروع کرتے ہوئے ان میں استعمال ہونے والے گوشت کی تنقیح کریں گے اور اس بات کا پتہ لگایاجائے گا کہ آیا پرانے شہر کے ہوٹل مالکین غیر قانونی ذبیحہ استعمال کر رہے ہیں یا پھر ان کے پاس بھی خانگی طور پر ذبح کیا گیا گوشت استعمال کیا جا رہا ہے ۔ بلدیہ کی جانب سے آج جن ہوٹل مالکین پر جرمانے عائد کئے گئے ہیں ان میں آنند وہار‘ بھدری ریسٹورینٹ ‘ ہوٹل گرین باؤرچی‘ باورچی ہوٹل چنتل کنٹہ ‘ سری لکشی ریسٹورینٹ کے علاوہ دیگر شامل ہیں۔جی ایچ ایم سی عہدیداروں نے بتایا کہ شہر میں ہوٹلوں میں صفائی اور غیر قانونی ذبیحہ کے استعمال کے متعلق آگہی حاصل کرنے کے لئے شروع کی گئی مہم کو زبردست عوامی تائید حاصل ہو رہی ہے اور عوام بلدیہ کے اس اقدام کو قابل ستائش قرار دے رہے ہیں کیونکہ طعام خانوں میں غیر قانونی ذبیحہ کے استعمال کے بڑھتے رجحان کو ختم کیا جانا ناگزیر ہے۔عہدیداروں نے بتایا کہ غیر قانونی ذبیحہ صرف لائسنس یافتہ مسالخ میں وٹرنری ڈاکٹر کی موجودگی میں ذبح کردہ جانور کو ہی قرار دیا جا سکتا کیونکہ اس کے علاوہ خانگی ذبح کئے گئے جانوروں کی ضمانت جی ایچ ایم سی کی جانب سے نہیں دی جاسکتی ۔ اسی لئے مجلس بلدیہ عظیم تر حیدرآباد کی جانب سے وٹرنری ڈاکٹر کی مہر لگائے گئے گوشت کے استعمال کو ہی درست قرار دیا جاتا ہے کیونکہ وہ وٹرنری ڈاکٹر جانور کی صحت کے متعلق ضمانت دیتا ہے جبکہ خانگی طور پر ذبح کئے جانے والے جانوروں کے متعلق کئی شبہات ہوتے ہیں۔ جی ایچ ایم سی کی جانب سے دونوں شہروں میں اب گوشت کی منتقلی کے دوران روک کر اس کی تحقیق کے متعلق اقدامات پر غور کیا جا رہا ہے تاکہ غیر قانونی ذبیحہ کو مکمل طور پر بند کرنے کے اقدامات میں شدت پیدا کی جا سکے۔ بتایاجاتا ہے کہ پرانے شہر میں آئندہ ہفتہ شروع کی جانے والی مہم کے دوران ہوٹلوں میں صفائی اور گوشت کے علاوہ کے دیگر امور کا بھی جائیزہ لیا جائے گا جن میں رات کو ہوٹل بند کرتے وقت بچ جانے والے گوشت و دیگر اشیائے خورد و نوش کا دوسرے دن استعمال اور گاہکوں کو بنیادی سہولتوں کی فراہمی شامل ہے۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT