Friday , August 18 2017
Home / شہر کی خبریں / بلدی انتخابات میں کانگریس امیدواروں کی ضمانتیں ضبط ہوں گی

بلدی انتخابات میں کانگریس امیدواروں کی ضمانتیں ضبط ہوں گی

گریٹر حیدرآبادمیونسپل کارپوریشن میں ٹی آر ایس کوبھاری اکثریت ملے گی: ٹی ہریش راؤ
حیدرآباد۔ /13ڈسمبر، ( سیاست نیوز) وزیر آبپاشی ریاست تلنگانہ مسٹر ٹی ہریش راؤ نے کانگریس کو اپنی سخت تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ آئندہ ماہ کسی بھی وقت منعقد ہونے والے گریٹر حیدرآباد میونسپل کارپوریشن انتخابات میں کانگریس پارٹی امیدواروں کو ڈپازٹس حاصل نہیں ہوسکیں گے۔ علاوہ ازیں کانگریس پارٹی کو جی ایچ ایم سی انتخابات میں حصہ لینے کیلئے امیدوار بھی فراہم نہیں ہوں گے کیونکہ کانگریس پارٹی میں کوئی مناسب قائد ہی نہیں ہے جبکہ تلگودیشم پارٹی کا بھی شہر حیدرآباد میں مکمل صفایا ہوچکا ہے اور بی جے پی کے ساتھ عوام ہی نہیں ہیں۔ مسٹر ہریش راؤ نے اخباری نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے بتایا کہ تلگودیشم پارٹی مکمل طور پر علاقہ آندھرا کو منتقل ہوچکی ہے، ان تمامحالات کو پیش نظر رکھتے ہوئے عوام پر وزیر موصوف نے زور دیا کہ گریٹر حیدرآباد میونسپل کارپوریشن انتخابات میں جی ایچ ایم سی آفس پر گلابی پرچم لہرانے کیلئے تیار رہیں۔ انہوں نے صدر گریٹر حیدرآباد کانگریس کمیٹی مسٹر ڈی ناگیندر کو بھی تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ ٹی ار ایس قائد وزیر داخلہ مسٹر این نرسمہا ریڈی پر تنقید کرنے کا کانگریس قائد مسٹر ناگیندر کو کوئی حق نہیں ہے۔ وزیر موصوف نے کہا کہ ریاست میں جب کانگریس برسر اقتدار تھی تب ریاست ہی نہیں بلکہ بالخصوص شہر حیدرآباد میں کانگریس پارٹی قائدین سٹیلمنٹس اور کمشینوں کے حصول میں مصروف رہا کرتے تھے۔ مسٹر ہریش راؤ نے سابق وزیر و صدر گریٹر حیدرآباد کانگریس کمیٹی مسٹر ڈی ناگیندر پر اپنی شدید برہمی کا اظہار کیا اور مسٹر  ناگیندر سے کہاکہ عوام اپ سے کہیں زیادہ ہوشیار ہیں اور عوام اس بات سے بخوبی واقف ہیں کہ مسٹر ناگیندر نے کانگریس سے مستعفی ہوکر ٹی آر ایس میں شامل ہونے کیلئے تلنگانہ راشٹرا سمیتی قائدین سے بات چیت کی تھی۔ وزیر آبپاشی نے مزید کہا کہ ہم جب اپوزیشن میں تھے تب ہم نے تمام جماعتوں کا تعاون حاصل کرکے علحدہ ریاست تلنگانہ کی تشکیل عمل میں لانے کے اقدامات کئے اور آج یہی ٹی آر ایس برسراقتدار رہتے ہوئے بھی تمام کو ساتھ لیکر چلتے ہوئے سنہرا تلنگانہ حاصل کرنے کیلئے کوشاں ہے اور تلنگانہ راشٹرا سمیتی قائدین کو کسی قسم کا غرور ہرگز نہیں ہے بلکہ عوامی خدمت انجام دینا ہی ہمارا اہم مقصد ہے۔ انہوں نے پرزور الفاظ میں کہا کہ سنہرے تلنگانہ کے حصول کیلئے جو کوئی بھی ملکر آئیں گے انہیں ساتھ لے کر چلنے کیلئے ہم ہمیشہ تیار ہیں۔ وزیر آبپاشی نے کہا کہ آئندہ دنوں میں شہر حیدرآباد میں پانی کی کوئی قلت نہ ہونے کیلئے موثر اقدامات کئے جائیں گے کیونکہ چیف منسٹر مسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے دوراندیشی کا مظاہرہ کرتے ہوئے گوداوری کے پانی کو شہر حیدرآباد لانے کے اقدامات کئے۔ انہوں نے یاد دلایا کہ سابق میں متحدہ حکومت میں سنگور، گنڈی پیٹ ، حمایت ساگر جیسے ذخائر آب خشک ہوجانے کی وجہ سے شہر حیدرآباد میں اتنی پانی کی قلت کبھی نہیں ہوئی ۔ وزیر موصوف نے مزید کہا کہ مشن بھگیردھا کے ذریعہ گھر گھر پانی سربراہ کیا جائے گا۔

TOPPOPULARRECENT