Sunday , September 24 2017
Home / Top Stories / بنجارہ ہلز پر خوفناک حادثہ، کار اُلٹ گئی

بنجارہ ہلز پر خوفناک حادثہ، کار اُلٹ گئی

تیز رفتار ڈرائیونگ کا بھیانک نتیجہ ، مفخم جاہ کالج کا طالب علم ہلاک، دو ساتھی شدید زخمی
حیدرآباد ۔ /11 جولائی (سیاست نیوز) بنجارہ ہلز علاقہ میں آج ایک خوفناک سڑک حادثہ پیش آیا جہاں کار کسی فلمی منظر کی طرح دو تا تین مرتبہ اُلٹ گئی۔ یہ منظر سی سی ٹی وی پر ریکارڈ ہوا جس میں تیز رفتار کار اُلٹنے کے بعد ڈیوائیڈر سے جا ٹکرائی۔ اِس حادثہ میں انجینئرنگ کالج کا ایک طالب علم ہلاک اور اُس کے دو ساتھی شدید زخمی ہوگئے۔ تفصیلات کے بموجب بنجارہ ہلز علاقہ کے مفخم جاہ انجنیئرنگ کالج سے وابستہ فجاحت علی بی ٹیک سال دوم کا طالب علم آج دوپہر 1.15 بجے اپنے کالج کے دو ساتھیوں واعظ ، جاوید دانش کے ہمراہ لنچ کے ارادہ سے بنجارہ ہلز ایکسپریس سیزنس روڈ نمبر 3 کیلئے روانہ ہوئے لیکن اُنھوں نے اپنا پروگرام تبدیل کرلیا اور واپس کالج کینٹین جارہے تھے کہ یہ حادثہ پیش آیا۔ فجاحت علی تیز رفتاری سے کار چلارہے تھے۔ زخمی طلباء نے پولیس کو بتایا کہ مسجد حسینی کے قریب تنگ موڑ پر کار کی رفتار تیز تھی اور اچانک ایک آٹو سامنے دکھائی دیا جس کی وجہ سے فجاہت علی نے بریک لگایا لیکن گاڑی بے قابو ہوکر اُلٹ گئی۔ بنجارہ ہلز پولیس کی جانب سے جائے حادثہ کے اطراف و اکناف کے سی سی ٹی وی فوٹیجیس میں یہ دیکھا گیا ہے کہ کار کی رفتار بہت زیادہ تھی۔ عینی شاہدین نے بتایا کہ تیز رفتار سے آنے والی i20 جس کا نمبر TS-09EB 6049 مسجد حسینی کے قریب حادثہ کا شکار ہوگئی اور اس کار ڈرائیور کا سر حادثہ میں پاش پاش ہوگیا جبکہ اُس کے دو ساتھی شدید زخمی ہوگئے۔ اس حادثہ کے بعد بنجارہ ہلز کے مصروف ترین علاقہ میں کئی گھنٹوں تک ٹریفک جام ہوگئی ٹریفک کو بحال کرنے کے لئے پولیس عملہ فوری حرکت میں آگیا اور حادثہ کا شکار کار، مہلوک نوجوان کی نعش کو جائے حادثہ سے منتقل کردیا۔ سب انسپکٹر پولیس بنجارہ ہلز مسٹر ہریش ریڈی نے بتایا کہ اِس حادثہ کی وجہ تیز رفتاری سے ڈرائیونگ ہے۔ پولیس بنجارہ ہلز نے 304A لاپرواہی سے گاڑی چلانے کا ایک مقدمہ درج کرکے تحقیقات کا آغاز کردیا۔

TOPPOPULARRECENT