Tuesday , May 30 2017
Home / ہندوستان / بندھوا مزدوری ختم کرنے جاگیردارانہ سوچ بدلنا ضروری ‘ مرکز

بندھوا مزدوری ختم کرنے جاگیردارانہ سوچ بدلنا ضروری ‘ مرکز

نئی دہلی 14 فبروری ( سیاست ڈاٹ کام )مرکزی وزیر بنڈارو دتاتریہ نے آج کہا کہ بندھوا مزدوری جو غلامی کی دوسری شکل اختیار کرگئی ہے جاگیردارانہ سوچ اور عوام کے رویہ میں تبدیلی کے ذریعہ ختم کی جاسکتی ہے اور یہ کام محض قانون سازی سے نہیں کیا جاسکتا ۔ مرکزی منسٹر آف اسٹیٹ محنت و روزگار نے کہا کہ بندھوا مزدوری ہمارے سماج پر کلنک ہے ۔ جاگردارانہ سوچ اس کی ایک اصل وجہ ہے ۔ اس عمل کو ختم کرنے کی بادشاہوں اور صوفی سنتوں نے کوشش کی ہے لیکن یہ سلسلہ ہنوز جاری ہے ۔ مزدوروں کا استحصال ایک نفسیاتی طرز بن گیا ہے اور دلت اور دوسری پچھڑی ذاتیں اس کی وجہ سے متاثر ہیں۔ دتاتریہ ایک سمینار سے خطاب کر رہے تھے ۔ انہوں نے کہا کہ بندھوا مزدوری آج غلامی کی دوسری شکل اختیار کرگئی ہے ۔ ہمارے پاس مناسب قوانین ہیں اور ہم اس قانون کو مزید موثر بنانے اقدامات کر رہے ہیں۔ لیکن اس لعنت کو ختم کرنے کیلئے ہمیں جاگیردارانہ سوچ کو بدلنے کی ضرورت ہے جو اب بھی پائی جاتی ہے ۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT