Thursday , September 21 2017
Home / Top Stories / بنگلہ دیش میں روہنگیائی مسلمانوں کو ہندوستان کی امداد

بنگلہ دیش میں روہنگیائی مسلمانوں کو ہندوستان کی امداد

۔53 میٹرک ٹن سامان ضروریات بنگلہ دیش کے سپرد۔ بنگلہ دیشی وزیر کا اظہار تشکر
ڈھاکہ 14 ستمبر ( سیاست ڈاٹ کام ) ہندوستان نے آج بنگلہ دیش کو مائنمار سے آئے روہنگیا مسلم پناہ گزینوں کیلئے 53 ٹن ریلیف ساز و سامان روانہ کیا ہے ۔ بدھ غلبہ والے مائنمار میں نسلی صفایہ کی مہم اور تشدد کے بعد روہنگیائی مسلمان بنگلہ دیش پہونچ رہے ہیں۔ چند دن قبل ہی بنگلہ دیش نے ہندوستان کو ان پناہ گزینوں کی آمد سے ہونے والے مسائل سے واقف کروایا تھا جس کے بعد ہندوستان نے یہ امداد روانہ کی ہے ۔ بنگلہ دیش کے ہائی کمشنر متعینہ نئی دہلی سید معظم علی نے معتمد خارجہ ایس جئے شنکر سے گذشتہ ہفتے ملاقات کی تھی اور روہنگیا کے مسئلہ پر تفصیلی تبادلہ خیال کیا تھا ۔ نئی دہلی میں وزارت خارجہ نے اپنے ایک بیان میں کہا کہ بنگلہ دیش میں آنے والے روہنگیا مسلم پناہ گزینوں کی بھاری تعداد اور پھر انسانی بحران کو دیکھتے ہوئے حکومت ہند نے بنگلہ دیش کی مدد کرنے کا فیصلہ کیا ہے اور اسی سلسلہ میں یہ امداد روانہ کی گئی ہے ۔ جو ریلیف ساز و سامان متاثرہ عوام کو فوری درکار تھا اس میں چاول ‘ دالیں ‘ شکر ‘ نمک ‘ خوردنی تیل ‘ چائے ‘ فوری قابل استعمال نوڈلس ‘ بسکٹس ‘ مچھر بتیاں وغیرہ شامل تھیں۔ بنگلہ دیشی مشن نے ٹوئیٹ کیا کہ آپریشن انسانیت : ہائی کمیشن کو ہندوستان کی جانب سے بنگلہ دیش کو انسانی بنیادوں پر فراہم کی گئی امداد کی پہلی کھیپ سونپ دی گئی ہے ۔ سشما سوراج کو ٹیاگ کرتے ہوئے ایک اور ٹوئیٹ میں کہا گیا ہے کہ ہندوستان کی انسانی بنیادوں پر فراہم کی گئی امداد کی پہلی کھیپ جو 53 میٹرک ٹن پر مشتمل تھی بنگلہ دیش آچکی ہے ۔ ہندوستان کی جانب سے بنگلہ دیش کو جملہ 7000 میٹرک ٹن امدادی ساز و سامان فراہم کیا جائیگا ۔ بنگلہ دیش کے روڈ ٹرانسپورٹ کے وزیر عبید القادر نے ہندوستانی ہائی کمشنر ہر وردھن شرنگلا سے یہ سامان حاصل کیا جبکہ ایک ہندوستانی طیارہ یہ ساز و سامان لئے چٹگانگ پہونچا تھا ۔ مشن نے کہا کہ عبیدالقادر نے اس امداد کو 1971 کی جنگ آزادی کے دوران ہندوستان کی جانب سے فراہم کردہ مدد سے تعبیر کیا ہے ۔ بنگلہ دیش کو ان دنوں مائنمار سے آنے والے ہزاروں پناہ گزینوں کا سامنا ہے ۔ اس نے بین الاقوامی برادری سے کہا تھا کہ وہ اس معاملہ میں مداخلت کرے اور ان پناہ گزینوں کے اخراج کو روکنے کیلئے مائنمار پر اثر انداز ہوا جائے ۔ اقوام متحدہ کے اعداد وش مار کے بموجب 379,000 روہنگیائی مسلمان مائنمار سے فرار ہوگئے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT