Tuesday , October 17 2017
Home / ہندوستان / بنگلہ دیش میں شیخ حسینہ حکومت کی بیدخلی کا منصوبہ

بنگلہ دیش میں شیخ حسینہ حکومت کی بیدخلی کا منصوبہ

شرعی قانون کا نفاذ اور ہندوستان میں جڑیں پھیلانے جے ایم بی کی سازش : این آئی اے
کولکاتہ ۔ 14 ڈسمبر ۔ ( سیاست ڈاٹ کام ) این آئی اے کی گزشتہ سال بردوان دھماکوں میں تحقیقات کے دوران یہ انکشاف ہوا کہ جماعت المجاہدین بنگلہ دیش ( جے ایم بی ) شیخ حسینہ حکومت کو بیدخل کرتے ہوئے شرعی قانون کے نفاذ اور اپنی سرگرمیوں کو ہندوستان میں وسعت دینے کی کوشش کررہی تھی ۔ نیشنل انوسٹی گیشن ایجنسی ( این آئی اے ) نے آج 2 اکٹوبر 2014 ء کو ہوئے بردوان دھماکوں کے سلسلے میں آج دوسری اضافی چارج شیٹ پیش کی ۔ ملزم نورالحق منڈل عرف نعیم اور 27 دیگر کے خلاف سٹی کورٹ میں پیش کی گئی اس اضافی چارج شیٹ میں بنگلہ دیش کے خلاف جنگ چھیڑنے کا الزام عائد کیا گیا ہے ۔ این آئی اے نے آج ایک صحافتی بیان میں کہاکہ جے ایم بی نے بنگلہ دیش میں جمہوری طورپر منتخبہ حکومت کو معزول کرتے ہوئے شرعی قانون کے نفاذ اور اپنی جڑیں ہندوستان میں پھیلانے کی سازش تیار کی تھی ۔ اُن کا مقصد یہ تھا کہ کھاگرا گڑھ ، بردوان میں بم سازی کی فیکٹری تیار کی جائے تاکہ مختلف شعبوں سے تعلق رکھنے والوں کو انتہاپسندی کی طرف راغب کیا جاسکے ، نئے ارکان کا تقرر ہوسکے اور اُنھیں منتخبہ مدارس جیسے سمولیا اور مقیم نگر کے علاوہ دیگر ٹھکانوں پر ٹریننگ دی جاسکے ۔ وہ ممنوعہ تنظیم کیلئے ارکان سے غریب مسلم طلبہ کی مدد کے بہانے فنڈس اکٹھا کرنے کا بھی منصوبہ رکھتے تھے ۔ تحقیقات کے دوران ان حقائق کا انکشاف ہوا ہے ۔ این آئی اے کے مطابق تمام 27 ملزمین کا ایک دوسرے سے ربط رہنے کی توثیق ہوئی ہے۔ نعیم سے پوچھ تاچھ پر یہ پتہ چلا کہ تنظیم ہوڑہ نارتھ اور ساؤتھ 24 پرگناس اور ہوگلی اضلاع میں نٹورک قائم کرنے کی کوشش کررہی تھی ۔ نعیم اس مقصد کیلئے بنگلہ دیش گیا اور ڈھاکہ میں جاتراوڑی کے علاوہ میرپور میں تقریباً دیڑھ ماہ قیام کیا ۔ جہاں اُسے بشیر عرف طلحہ اور انیس عرف کوثر نے بم سازی کی ٹریننگ دی تھی ۔ بشیر سینئر جے ایم بی لیڈر سعیدالرحمن کا بیٹا ہے ۔ نعیم کو جو مرشدآباد میں بخشی پور کا ساکن ہے جون میں ہوڑہ ریلوے اسٹیشن پر گرفتار کیا گیا تھا ۔

TOPPOPULARRECENT