Monday , September 25 2017
Home / دنیا / بنگلہ دیش میں 70 سالہ بدھسٹ راہب کا قتل

بنگلہ دیش میں 70 سالہ بدھسٹ راہب کا قتل

ڈھاکہ 14 مئی ( سیاست ڈاٹ کام ) بنگلہ دیش میں آج ایک دور دراز مقام پر واقع بدھ عبادتگاہ میں ایک 70 سالہ بدھسٹ راہب کو قتل کردیا گیا ۔ پولیس کا کہنا ہے کہ ملک میں حالیہ عرصہ میں سکیولر کارکنوں ‘ بلاگرس اور دوسرے طبقات سے تعلق رکھنے والے افراد کے قتل کا جو سلسلہ شروع ہوا ہے یہ قتل بھی اسی کا تسلسل دکھائی دیتا ہے۔ کہا گیا ہے کہ بندربن پہاڑی ضلع میں نیکھانگ چاری علاقہ میں دور دراز مقام پر واقع اس بدھسٹ عبادتگاہ کے سربراہ 70 سالہ موانگ شوئی وو آج صبح مردہ پائے گئے ۔ ایک بدھ راہب انہیں ناشتہ دینے وہاں گیا تو اس قتل کی اطلاع ملی ہے۔ پولیس نے یہ بات بتائی ۔ مقامی پولیس اسٹیشن کے عہدیدار قاضی احسن نے بتایا کہ حملہ آوروں نے اس راہب کا گلا کاٹ دیا ۔ ایسا لگتا ہے کہ اسے کل رات نصف شب کے بعد کسی وقت ہلاک کیا گیا ہے جب وہ خانقاہ میں تنہا تھا ۔بنگلہ دیش میں حالیہ وقتوں میں تخریب کاروں کی جانب سے مختلف شعبہ جات سے تعلق رکھنے والے افراد کے قتل کا جو سلسلہ شروع ہوا ہے یہ قتل بھی اسی کی ایک کڑی دکھائی دیتا ہے ۔ ابھی تک کسی بھی گروپ نے اس قتل کی ذمہ داری قبول نہیں کی ہے اور حکام نے حملہ آوروں کا پتہ چلانے کیلئے تحقیقات شروع کردی ہیں۔ مقامی افراد کا کہنا ہے کہ یہ بدھسٹ خانقاہ دور دراز کے اور ویران مقام پر واقع ہے ۔ یہاں آس پاس کوئی آبادی نہیں ہے اور مہلوک راہب یہاں تنہا رہا کرتا تھا ۔واضح رہے کہ ٹھیک ایک ہفتہ قبل شمال مغربی راج شاہی شہر میں ایک 65 سالہ مسلم صوفی مبلغ کو اسی انداز میں نا معلوم حملہ آوروں نے گلا کاٹ کر قتل کردیاتھا ۔ حالیہ وقتوں میں بنگلہ دیش میں اس طرح کے منظم اور منصوبہ بند حملوں کی تعداد میں اضافہ ہوگیا ہے اور یہاں مخصوص طبقات کو نشانہ بنایا جا رہاہ ے ۔ حالیہ واقعات میں ایک آزاد خْال پروفیسر کو بھی قتل کردیا گیا تھا جو راج شاہی شہر میں اپنے گھر کے قریب تھے ۔ ان کا بھی گلا کاٹ دیا گیا تھا ۔

TOPPOPULARRECENT