Monday , September 25 2017
Home / کھیل کی خبریں / بولٹ دنیاکے سب سے تیز رفتار انسان برقرار 100میڑ کی دوڑ میں پھر گولڈ میڈل

بولٹ دنیاکے سب سے تیز رفتار انسان برقرار 100میڑ کی دوڑ میں پھر گولڈ میڈل

ریو ڈی جنریو ۔15اگست (سیاست ڈاٹ کام) برازیل میں جاری اولمپکس میں جمیکا کے یوسین بولٹ سو میٹر کی دوڑ میں طلائی تمغہ جیت کر اولمپک مقابلوں کی اس دوڑ میں تین طلائی تمغے جیتنے والے پہلے کھلاڑی بن گئے ہیں۔یوسین بولٹ نے دوڑکے آغاز کے ساتھ ہی انتہائی چالاکی سے کام لیتے ہوئے اپنے حریف جسٹن گیاٹلن کو آگے بڑھنے کا موقع فراہم کیا اورخود اپنی رفتار سست رکھی لیکن آخر ی چند سکنڈ میں انہوںنے اپنی تیز رفتاری کے ذریعہ دوڑکا پانسہ ہی پلٹ دیا۔ اور سو میٹر کی دوڑ میں تیسری مرتبہ گولڈ مڈل حاصل کرتے ہوئے اس طرح کا رنامہ انجام دینے والے دنیا کے پہلے اتھلیہٹ بن گئے۔ اس مقابلے میں امریکہ کے جسٹن گیاٹلن کو سلور اوراینڈی کو کانسے کاتمغہ حاصل ہوا۔بولٹ کے علاوہ نویں دن کی خاص بات چار سو میٹر کی دوڑ میں جنوبی افریقہ کے ویڈ وین نیکرک کی ریکارڈ ساز کارکردگی رہی۔نیکرک نے مقررہ فاصلہ 43.03سیکنڈ میں طے کر کے نہ صرف اس دوڑ میں طلائی تمغہ جیتا بلکہ امریکہ کے مائیکل جانسن کا 17 سال پرانا عالمی ریکارڈ بھی توڑ دیا۔نواں دن برطانیہ کے لیے بھی بہترین رہا اور اس کے کھلاڑیوں میں نے مزید پانچ طلائی تمغے جیت کر اپنے ملک کو میڈل ٹیبل میں دوسرے نمبر پر پہنچا دیا۔یوسین بولٹ نے سو میٹر کی دوڑ کے فائنل میں اپنے روایتی حریف امریکہ کے جسٹن گیٹلن کو سخت مقابلے کے بعد شکست دی۔بولٹ نے سو میٹر کا فاصلہ 9.81 سیکنڈ میں طے کیا جبکہ دو بار ممنوعہ ادویات استعمال کرنے کے الزام میں پابندی کا سامنا کرنے والے گیٹلن ان سے صرف 0.80 سیکنڈ پیچھے رہے۔سو میٹر کی دوڑ میں عالمی ریکارڈ یافتہ بولٹ نے فتح کے بعد ذرائع ابلاغ کو بتایا کہ ’مجھے زیادہ تیز بھاگنے کی توقع تھی، لیکن پھر بھی خوشی ہے کہ میں جیت گیا۔ میں یہاں اپنی کارکردگی دکھانے آیا ہوں اور میں نے وہی کیا جو مجھے کرنا چاہیے تھا۔

TOPPOPULARRECENT