Thursday , August 17 2017
Home / شہر کی خبریں / بونال تہوار کے سرکاری انتظامات کا جائزہ

بونال تہوار کے سرکاری انتظامات کا جائزہ

مندروں میں انتظامات ، جلوس کا بندوبست ، محمد محمود علی و سرینواس یادو کا اجلاس سے خطاب
حیدرآباد۔/9 جون، ( سیاست نیوز) سرکاری طور پر منائے جانے والے بونال تہوار کے انتظامات کے سلسلہ میں آج اعلیٰ سطحی اجلاس منعقد ہوا۔ ڈپٹی چیف منسٹر محمد محمود علی اور وزیر انیمل ہسبنڈری ٹی سرینواس یادو نے مختلف محکمہ جات کے اعلیٰ عہدیداروں کے ساتھ جائزہ اجلاس میں بونال کے موقع پر مندروں میں انتظامات اور جلوس کے موقع پر بندوبست کا جائزہ لیا۔ ڈپٹی چیف منسٹر محمد محمود علی نے کہا کہ بونال تہوار گنگا جمنی تہذیب کی علامت حیدرآباد کا اہم تہوار ہے اور تمام محکمہ جات کے عہدیداروں کو اس کے کامیاب انعقاد کی مساعی کرنی چاہیئے۔ انہوں نے کہا کہ گذشتہ سال کے مقابلہ جاریہ سال مزید بہتر انتظامات کئے جائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ تلنگانہ ریاست کے قیام کے بعد چیف منسٹر چندر شیکھر راؤ کی قیادت میں تمام مذاہب کے عید و تہوار اہتمام کے ساتھ منائے جارہے ہیں۔ اعلیٰ سطحی جائزہ اجلاس میں پرنسپال سکریٹری آر اینڈ بی سنیل شرما، جی ایچ ایم سی کمشنر جناردھن ریڈی، میٹرو واٹر ورکس منیجنگ ڈائرکٹر دانا کشور، کمشنر اطلاعات و تعلقات عامہ نوین متل، سکریٹری فینانس شیو شنکر، حیدرآباد کلکٹر راہول بوجا، رنگاریڈی کلکٹر رگھونندن راؤ کے علاوہ پولیس عہدیداروں سرینواس، سومتی، گریٹر حیدرآباد میونسپل کارپوریشن ایڈیشنل کمشنر ہری چندن، فائر سرویسس کے ایڈیشنل ڈائرکٹر لکشمی پرساد اور دوسروں نے شرکت کی۔ وزیر انیمل ہسبنڈری ٹی سرینواس یادو نے عہدیداروں کو ہدایت دی کہ ریاستی تہوار کی حیثیت سے منائے جانے والے بونال کے موقع پر بھکتوں کی سہولت کیلئے ہر طرح کے انتظامات کئے جائیں اور انہیں کسی بھی سطح پر کوئی دشواری نہ ہو۔ حیدرآباد میں 17جولائی کو بونال تہوار منایا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ اس تہوار کے سلسلہ میں وزارت داخلہ، اکسائیز اور دیگر عہدیداروں کے ساتھ ایک اور اجلاس منعقد کیا جائے گا۔ 24اور 25جولائی کو سکندرآباد کی اُجین مہانکالی مندر میں بونال تقاریب ہوں گی۔ اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ مختلف محکمہ جات کے عہدیداروں پر مشتمل کوآرڈینیشن کمیٹی تشکیل دی جائے۔ اعلیٰ عہدیدار مختلف علاقوں کا دورہ کرتے ہوئے انتظامات کا جائزہ لیں۔ عہدیداروں سے کہا گیا کہ امکانی بارش کو دیکھتے ہوئے مندروں اور اس کے اطراف شامیانوں کا انتظام کیا جائے۔ مندروں کو برقی کی موثر سربراہی، ٹریفک پر قابو پانے کیلئے خصوصی بندوبست، مندروں کے پاس بھکتوں کے لئے بیریکٹنگ، پینے کے پانی کی سربراہی، خصوصی بسوں کا انتظام اور دیگر سہولتوں کیلئے ہدایات جاری کی گئیں۔

TOPPOPULARRECENT