Saturday , October 21 2017
Home / ہندوستان / بچیوں کیساتھ تعصب کی ذہنیت تبدیل ہونا ضروری

بچیوں کیساتھ تعصب کی ذہنیت تبدیل ہونا ضروری

گاندھی نگر۔ 8 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) وزیراعظم نریندر مودی نے آج کہا کہ بچیوں کا تحفظ ’’سماجی، قومی اور انسانی ذمہ داری‘‘ ہے۔ انہوں نے خاتون سرپنچوں پر زور دیا کہ نامولود بچیوں کے قتل کے انسداد میں اہم کردار ادا کریں۔ وزیراعظم نے کہا کہ لڑکیوں کے ساتھ تعصب کی ذہنیت تبدیل ہونا ضروری ہے۔ وہ بین الاقوامی یوم خواتین کے موقع پر خاتون سرپنچوں کے قومی کنونشن سے خطاب کررہے تھے۔ انہوں نے کہا کہ ایک ہزار مردوں کے مقابل صرف 800، 850، 900 خواتین مختلف ریاستوں میں ہیں۔ اگر سماج میں  ایسا عدم توازن قائم رہے تو سماج ترقی کیسے کرے گا۔ انہوں نے کہا کہ یہ سماجی ذمہ داری ہے۔ خاتون سرپنچوں کو امکانی حد تک زیادہ کامیابی سے اس سماجی ذہنیت کو بدلنا چاہئے۔ سوچھ شکتی 2017ء پروگرام مہاتما مندر میں منعقد کیا گیا تھا جس سے وزیراعظم خطاب کررہے تھے۔ انہوں نے کہا کہ لڑکیوں کے جنین کو قتل کرنے میں غالباً خاتون سرپنچ زیادہ کامیاب ثابت ہوسکتی ہیں۔ اس لئے بیٹی بچاؤ ہماری سماجی، قومی اور انسانی ذمہ داری ہے۔ انہوں نے تقریباً 6000 خاتون سرپنچوں کو جو ملک گیر سطح سے کنونشن میں شرکت کررہی تھیں، پرزور انداز میں کہا کہ اپنے متعلقہ گاؤں میں بچیوں کو اسکول میں داخل کروانے کو یقینی بنائیں۔ سوچھ بھارت مشن میں خواتین کی دین کی ستائش کرتے ہوئے مودی نے دیہی ہندوستان کو ٹیکنالوجی کے اعتبار سے قابل بنانے کی ضرورت پر زور دیا۔ اس بارے میں پارلیمنٹ میں اعتراض کرنے والے اپوزیشن قائدین پر بھی انہوں نے طنز کرتے ہوئے کہا کہ ہمیں کل ہی ایک ایسا دیہات تعمیر کرنا چاہئے جہاں کے ہر شہری کے پاس چھوٹا سا گھر ہو اور وہ ہر ہفتہ ایک یا دو دن آرام کرسکے۔ ایسا اسی صورت میں ممکن ہے جبکہ ہم اس کی کوشش کریں۔ مودی نے کہا کہ گجرات کے ایک قبائیلی دیہات میں انہوں نے 10 سال قبل ہی خواتین کو موبائیل فون پر تصویریں لیتے ہوئے دیکھا ہے۔ انہوں نے خاتون سرپنچوں پر زو ردیا کہ اپنے دیہاتوں میں صفائی پر توجہ دیں۔ احمدآباد سے موصولہ اطلاع کے بموجب مودی کے دورہ احمدآباد سے قبل دلت قائد چگنیش میوانی اور دیگر پسماندہ طبقات کے قائد الپیش ٹھاکر کو پولیس نے آج گرفتار کرلیا۔ وہ مبینہ طور پر وزیراعظم کی ایک تقریب میں احتجاجی مظاہرہ کرنے کا منصوبہ بنارہے تھے۔ ان کے ہمراہ 50 کانگریس کارکنوں کو بھی گرفتار کیا گیا جو مہاتما مندر میں مودی کے خلاف احتجاج کا منصوبہ بنارہے تھے۔

TOPPOPULARRECENT