Friday , July 28 2017
Home / شہر کی خبریں / بڑے نوٹوں کی تبدیلی حصول اقتدار کیلئے سیاسی سازش

بڑے نوٹوں کی تبدیلی حصول اقتدار کیلئے سیاسی سازش

مودی کے فیصلہ سے ملک میں جنگ کا ماحول ، غریب پریشان ، ورا ورا راؤ
حیدرآباد /17 نومبر ( سیاست نیوز ) ملک میں کرنسی نوٹوں پر پابندی اور نئی کرنسی کی ایجاد غریبوں کے حق میں نہیں بلکہ اقتدار کو حاصل کرنے کی سیاسی سازش ہے ۔ ملک میں مودی حکومت جنگ کا ماحول پیدا کرتے ہوئے انتخابات میں کامیابی حاصل کرنا چاہتی ہے ۔ ان خیالات کا اظہار انقلابی ادیب مسٹر ورا ورا راؤ نے کیا ۔ انہوں نے کرنسی نوٹوں پر پابندی اور نئی کرنسی کے ایجاد کو ملک کے مفاد میں قرار دینے کی باتوں کو مسترد کردیا اور کہا کہ سرحد کے پار دہشت گردی اور اندرون ملک بدعنوانی کے نام پر مودی حکومت سیاسی کھیل کھیل رہی ہے ۔ انہوں نے بتایا کہ اترپردیش انتخابات کے پیش نظر اس طرح کا فیصلہ لیا گیا تاکہ بی ایس بی اور ایس پی کو ناکام بنایا جاسکے ۔ مسٹر ورا ورا راؤ نے کہا کہ ریاست اترپردیش میں اب چونکہ عوام بالخصوص دلت اور اقلیتی طبقہ مایاوتی کی جانب اپنی توجہ مرکوز کررہا ہے ۔ ایسے میں بی جے پی اسکا مقابلہ قطعی نہیں کرسکتی لہذا عوام کو الجھاکر سیاسی مخالفین کو تباہ کرنے کیلئے ایسی حرکتیں کر رہی ہے ۔ جبکہ کرنسی نوٹوں کی تبدیلی سے بدعنوانی ، رشوت خوری اور کالے دھن پر کوئی اثر پڑنے والا نہیں ۔انہوں نے کہا کہ کالا بازاری اور کالادھن رکھنے والے بی جے پی کے ارکان کا تو پہلے ہی معاملہ صاف کرلیا گیا اور سیاسی مخالفین سے لڑائی کیلئے غریب عوام کو استعمال کیا گیا ہے ۔ انہوں نے مودی حکومت سے سوال کیا کہ وہ بیرون ممالک چھپائے گئے کالے دھن کو واپس لانے کیلئے کیوں اقدامات نہیں کرتی ۔ انہوں نے کہا کہ سرحد پار دہشت گردی کے نام پر تو کبھی اندرون ملک دہشت گردی کے نام پر سیاسی مخالفین سے جنگ کرتے ہوئے بی جے پی چناؤ میں کامیاب ہونا چاہتی ہے ۔ جبکہ عوام کا بھلا کرتے ہوئے اقتدار حاصل کرنا اس پارٹی کی فطرت میں داخل نہیں ہے ۔ مسٹر ورا ورا راؤ نے مودی حکومت کو سخت تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ مودی 2019 کا نشانہ ابھی سے تیار کرلیا ہے ۔ تاہم انہوں نے کہا کہ ملک کا عام آدمی جو ان حالات سے کافی پریشان ہے حکومتوں کا منہ توڑ جواب دے گا اور ملک کے حالات معاشی نظام میں مودی حکومت کے فیصلے سے کوئی تبدیلی ہونے والی نہیں ہے ۔

TOPPOPULARRECENT