Tuesday , September 26 2017
Home / ہندوستان / بھارت ماتاکی جئے نعرہ نہ لگانے والوں کو ملک میں رہنے کا حق نہیں : فرنویس

بھارت ماتاکی جئے نعرہ نہ لگانے والوں کو ملک میں رہنے کا حق نہیں : فرنویس

ناسک ۔3اپریل ( سیاست ڈاٹ کام ) قوم پرستی پر جاری مباحث کے دوران چیف منسٹر مہاراشٹرا دیویندر فرنویس نے آج کہا کہ جو ’’ بھارت ماتا کی جئے ‘‘ نعرہ لگانے کیلئے تیار نہیں انہیں ملک میں رہنے کا حق نہیں ۔ انہوں نے کل ایک جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ’’ بھارت ماتا کی جئے‘‘ کہنے کے بارے میں اب بھی تنازعہ چلا آرہا ہے اور جو لوگ اس کی مخالفت کررہے ہیں انہیں یہاں رہنے کا کوئی حق نہیں پہنچتا ۔ انہوں نے کہاکہ ہندوستان میں رہنیوالوں کو ’’ بھارت ماتا کی جئے ‘‘ نعرہ لگانا ہوگا ۔ انہوں نے نائب صدر کانگریس راہول گاندھی کو بھی تنقیدوں کا نشانہ بنایا اور کہا کہ وہ مخالف قوم نعرے لگانے والوں کی تائید کررہے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ اپوزیشن جماعتوں کو بی جے پی کے خلاف احتجاج کرنا چاہیئے لیکن وہ ’’ بھارت ماتا ‘‘  نعرہ کی مخالفت نہ کریں‘ ورنہ ملک کی عوام انہیں معاف نہیں کریں گے ۔انہوں نے کہا کہ بھارت ماتا کی جئے کا نعرہ مذہب سے تعلق نہیں رکھتا ۔ اسی دوران آل انڈیا ائمہ تنظیم کے سربراہ عمر احمد الیاسی نے چیف منسٹر مہاراشٹرا پر تنقید کی اور کہا کہ ذمہ دار افراد کو اس طرح کے بیانات دینے سے گریز کرنا چاہئیے ۔ کسی کو بھی یہ کہنے کا حق نہیں ہے کہ کس کو اس ملک میں رہنا ہوگا اور کس کو نہیں۔

بی جے پی نے بھارت ماتا کی جئے کہنے کے لئے کسی کو مجبور نہیں کیا
احمد آباد 3 ؍ اپریل ( سیاست ڈاٹ کام) بھارت ماتا کی جئے کا نعرہ لگانے سے متعلق تنازعہ کے درمیان میں بی جے پی رکن پارلیمنٹ اور اداکار پریش راول نے آج کہا کہ ان کی پارٹی نے کسی پر بھی بھارت ماتا کی جئے کا نعرہ لگانے کے لئے زور نہیں دیا ہے ۔ اور لوگوں پر دباؤ ڈالنا غیر مناسب ہے ۔ بھارت ماتا کی جئے کا نعرہ صرف قوم پرستی کے احساس کا اظہار ہے ۔ دارالعلوم دیوبند کے فتوی پر ردعمل ظاہر کرتے ہوئے پریش راول نے کہا کہ ہندوستانی عوام اپنے وطن سے کس حد تک محبت کرتے ہیں اس کا ایک ثبوت ہے ۔

TOPPOPULARRECENT