Saturday , May 27 2017
Home / ہندوستان / بھگواء دہشت گردوں کو شدید دھکہ، مداخلت کار کی درخواست منظور

بھگواء دہشت گردوں کو شدید دھکہ، مداخلت کار کی درخواست منظور

ممبئی ، 14 فروری(سیاست ڈاٹ کام) مالیگاؤں 2008 دھماکہ معاملے کا سامنا کررہے بھگوا ء دہشت گردوں کو آج اس وقت شدید دھچکہ لگا جب ان کی جانب سے شدید مخالفت کے باوجود خصوصی این آئی اے عدالت نے متاثرین کو اس معاملے میں بطور مداخلت کار (انٹروینر) تسلیم کرلیا۔اس سے قبل خصوصی مواقعوں پر مداخلت کار کو اپنے موقف کا اظہار کرنے کی اجازت تھی لیکن اب مکمل اختیار حاصل ہوگیا ہے جس سے بھگواء دہشت گردوں کو شدید پریشانی کا سامنا ہے ۔موصولہ اطلاعات کے مطابق بم دھماکوں کے متاثرین نے جمعیۃ علماء مہاراشٹر (ارشد مدنی) سے رجوع کیا تھا اور اس معاملے میں مداخلت کرنے کی گذارش کی تھی کیونکہ تحقیقاتی دستہ ملزمین کو مدد پہنچانے کے درپے ہے ۔سید نثار جن کا لڑکا سید اظہر بم دھماکوں میں شہید ہوا تھا کی جانب سے ایڈوکیٹ شریف شیخ نے وکالت نامہ خصوصی عدالت میں داخل کیا جس پر بھگواء ملزمین کے وکلاء اور وکیل استغاثہ نے مخالفت کی لیکن فریقین کے دلائل کی سماعت کے بعد خصوصی این آئی اے جج ایس ڈی ٹیکولے نے جمعیۃ کے وکلاء کو اس پورے معاملے میں بطور مداخلت کار حصہ لینے کی اجازت دی ۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT