Monday , August 21 2017
Home / اضلاع کی خبریں / بھینسہ میں اردو میڈیم ڈگری کالج کا قیام ناگزیر

بھینسہ میں اردو میڈیم ڈگری کالج کا قیام ناگزیر

بھینسہ ۔16 اپریل ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) علحدہ تلنگانہ ریاست میں ٹی آر ایس پارٹی اقتدار پر فائز ہوتے ہی وزیراعلیٰ کے چند رشیکھر راؤ اپنی سیکولر ذہنیت سے حکمت عملی دکھاتے ہوئے ریاست کے تمام طبقوں کی خوشحالی کیلئے مختلف اسکیمات‘ ترقیاتی کاموں اور تعلیمی اداروں کو روبہ عمل لاتے ہوئے تلنگانہ کو سنہرے تلنگانہ کی جانب گامزن کرنے میں مصروف دیکھے جارہے ہیں ۔ شہر کثیر مسلم آبادی والا علاقہ ہے جس کے اطراف و اکناف کئی مواضعات میں مسلمان موجود ہیں لیکن بھینسہ میں آج تک ڈگری کالج اردو میڈیم طلباء و طالبات کیلئے قائم نہیں کیا گیا جس کی وجہ سے انٹرمیڈیٹ کی تعلیم حاصل کرنے کے بعد کئی طلبہ تعلیم ترک کرنے پر مجبور ہورہے ہیں جس کی وجہ سے بھینسہ شہر تعلیمی اعتبار سے پسماندگی کا شکار ہورہا ہے ۔ بھینسہ کے اولیاء طلبہ کا کہنا ہے کہ شہر میں اردو میڈیم ڈگری کالج نہ ہونے کی وجہ سے کئی طلباء وطالبات نقل مقام کرتے ہوئے نظام آباد ‘ نرمل اور کسی دوسرے مقام سے ڈگری کالج میں داخلہ لیتے ہوئے تعلیم یافتہ بننے کیلئے کافی مسائل کا سامنا کررہے ہیں ۔ اولیائے طلبہ کا کہنا ہیکہ نقل مقام کرنے کے دوران سفر میں لڑکیوں کو کئی ایک مسائل سے دوچار ہونا پڑرہا ہ اور پریکٹیکل امتحانات یا سالانہ امتحانات میں طلباء وطالبات اُسی مقام پر قیام کررہے ہیں ۔ آخر میں اولیائے طلبہ نے حلقہ اسمبلی مدہول جی وٹھل ریڈی سے مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ مقامی رکن اسمبلی نے اپنے انتخابی منشور کے دوران شہر میں اردو میڈیم ڈگری کالج قائم کرنے کا وعدہ کیا تھا لیکن تقریباً ڈھائی سال کا عرصہ گذر جانے کے باوجود رکن اسمبلی جی وٹھل ریڈی نے اپنے انتخابی وعدہ کو عملی جامہ نہیں پہنایا ۔ اولیائے طلبہ نے مذکورہ ریاستی قائدین سے شہر میں اقلیتی اقامتی بوائز انگلش اسکول کی منظوری پر اظہار تشکر کیا ۔

TOPPOPULARRECENT