Friday , August 18 2017
Home / ہندوستان / بہار شریف میں پاکستانی پرچم لہرانے کا واقعہ

بہار شریف میں پاکستانی پرچم لہرانے کا واقعہ

ایک خاتون گرفتار اور غیر ملکی پرچم ضبط
بہار شریف ( نالندہ ) ۔ 21 ۔ جولائی : (سیاست ڈاٹ کام ) : چیف منسٹر بہار نتیش کمار کے آبائی ضلع نالندہ کے لھیري تھانہ علاقے کے کھرادي محلہ واقع ایک مکان پر پاکستان کا پرچم لھرائے جانے سے پولیس اور انتظامیہ سکتے میں ہے ۔پولیس سپرنٹنڈنٹ کمار آشیش نے یہاں بتایا کہ اطلاع ملی تھی کہ کھرادي محلہ واقع ایک مکان کی چھت پر پاکستانی پرچم لہرایا جا رہا ہے ۔ معاملے کی اطلاع ملتے ہی پولیس نے موقع پر پہنچ کر پاکستانی پرچم کوضبط کر لیا ہے ۔ انہوں نے بتایا کہ اس سلسلے میں گھر میں موجود خواتین شبانہ انور کو گرفتار کیا گیا ہے ۔مسٹرآشیش نے بتایا کہ گھر کا مالک ضیاو الدین رضا خان عرب ملک میں کام کرتا ہے ۔ پولیس معاملے کی چھان بین کر رہی ہے ۔  ادھر انوار الحق کے خاندان کے لوگوں نے بتایا کہ ان کے گھر پر گزشتہ 6 سال سے رمضان کے مہینے میں پاکستان کا پرچم لہرایا جا رہا تھا۔ شادی کے کافی عرصے بعد بھی بیٹا پیدا نہیں ہونے پر شبانہ انور نے منت مانگی تھی کہ بیٹا ہوا تو پاکستان جائیں گے ۔ وہ لوگ پاکستان نہیں جا پائے تو اپنے گھر پر ہی وہاں کا پرچم لہرانے لگے ۔اس واقعہ کے بعد مقامی لوگ مشتعل ہیں۔ فی الحال پورے علاقے میں حالات کشیدہ لیکن کنٹرول میں ہے ۔واضح رہے کہ 15 جولائی کو پٹنہ میں مسلم تنظیم سے وابستہ لوگوں نے ذاکر نائک اور آل انڈیا مجلس اتحاد مسلمین کے صدر اسدالدین اویسی کی حمایت میں جلوس نکالا تھا۔ اس دوران کچھ لوگوں نے مبینہ طور پر پاکستان کی حمایت میں نعرے بازی کی تھی۔ اس معاملے میں پٹنہ پولیس نے مدھوبنی کے محمد توفیق کو گرفتار کیا تھا۔

TOPPOPULARRECENT