Thursday , October 19 2017
Home / سیاسیات / بہار میں آج قطعی رائے دہی کیلئے اسٹیج تیار

بہار میں آج قطعی رائے دہی کیلئے اسٹیج تیار

15543594 اہل رائے دہندے ، 827 بشمول 58 خاتون امیدواروں کی انتخابی قسمت کا فیصلہ کریں گے
پٹنہ ۔ 4 ۔ نومبر (سیاست ڈاٹ کام) بہار اسمبلی انتخابات میں کل 57 نشستوں کیلئے پانچویں اور قطعی آخری مرحلہ کی رائے دہی ہوگی، جس میں سینئر وزیر وجیندر پرساد یادو (جے ڈی یو) اور آر جے ڈی رکن اسمبلی پارٹی قائد عبدالباری صدیقی اور دیگر کئی قائدین کی انتخابی قسمت کا فیصلہ ہوجائے گا۔ 57 حلقوں میں سے 24 سیمانچل علاقہ کے ہیں جو مغربی بنگال کی سرحد سے متصل ہے اور 9 اضلاع مدھوبنی، دربھنگا ، سوپوال ، مادھے پورہ ، سہرسا، اریریا ، کشن گنج ، پورنیا اور کٹیہار پر مشتمل ہے۔ جملہ 15543595 اہل رائے دہندے رائے دہی میں حصہ لیں گے اور 827 امیدواروں بشمول 58 خواتین کے انتخابی مقدر کا فیصلہ کردیں گے ۔ جو لوگ نامور امیدواروں کے زمرے میں آتے ہیں ، ان کے انتخابی قسمت کا فیصلہ بھی آخری مرحلہ کی رائے دہی میں ہوجائے گا۔ ان میں جے ڈی یو کے سینئر وزیر بجیندر پرساد یادو (سوپوال) ، آر جے ڈی رکن اسمبلی پارٹی قائد صدیقی (علی نگر) ریاستی وزیر نریندر نارائن یادو ، عالم نگر اور لالو پرساد کے دست راست بھولا یادو (بہادر پور) شامل ہیں۔ دو نشستوں کے سوائے  جو سمری بختیار پور میں ہیں، رائے دہی باقی 55 حلقوں میں 7 بجے صبح تا 5 بجے شام ہوگی۔

ایڈیشنل چیف الیکٹورل آفیسر آر لکشمنن نے کہا کہ دو نکسلائٹس زیر اثر علاقوں سمری بختیار پور اور مہیسی (ضلع سہرسا) میں رائے دہی کے وقت میں دو گھنٹے کمی کی گئی ہے اور یہ 3 بجے سہ پہر ختم ہوجائے گی۔ سابقہ 4 مرحلوں کی طرح این ڈی اے اور جے ڈی یو ، آر جے ڈی اور کانگریس کے عظیم سیکولر اتحاد کے درمیان پانچویں مرحلہ کی رائے دہی میں تمام 57 نشستوں پر سخت مقابلہ ہے ۔ اس مرحلہ میں حیدرآباد کی مجلس کے رکن پارلیمنٹ اسد الدین اویسی نے بھی بہار میں اپنے 6 امیدوار سیمانچل علاقہ سے کھڑا کئے ہیں، جہاں مسلمانوں کی غالب آبادی ہے ۔ علاوہ ازیں تیسرے محاذ کی آدھار پارٹی جس کے صدر مادھے پورہ کے رکن پارلیمنٹ پپو یادو ہیں۔ کوسی پٹی میں مرکز توجہ ہیں۔ این سی پی اور جے ایم ایم نے بھی اس مرحلہ میں اپنے امیدوار کھڑے کئے ہیں۔ بی جے پی نے 38 ، ایل جے پی نے 11 ، آر ایل ایس پی نے 5 اور ہندوستانی عوامی مورچہ نے تین امیدوار کھڑا کئے ہیں۔ جے ڈی یو کے 25 ، آر جے ڈی کے 20 اور کانگریس کے 12 امیدوار مقابلہ میں ہیں۔

TOPPOPULARRECENT