Sunday , August 20 2017
Home / ہندوستان / بہار کا معزول سائنس ٹاپر گرفتار

بہار کا معزول سائنس ٹاپر گرفتار

پٹنہ، 3 اگست (سیاست ڈاٹ کام) بہار میں اس سال کے انٹر میجیٹ امتحان میں سائنس کے شعبہ کے ایک ٹاپر راہل کمار کو آج خصوصی تفتیشی ٹیم نے ویشالی ضلع سے گرفتار کرلیا ہے ۔پٹنہ ہائی کورٹ نے انٹر میجیٹ امتحان کے گھپلہ میں چار ”جعلی ٹاپرز” کے خلاف غیر ضمانتی وارنٹ گرفتاری جاری کئے تھے تبھی سے راہل کمار فرار تھا۔سماجیات کے شعبہ میں ٹاپ کرنے والی روبی رائے کو پہلے ہی گرفتارکرنے کے بعد ضمانت پر رہا کردیا گیا تھا مگر سائنس کے ٹاپر سوربھ شریشٹھ اور شالنی رائے پولیس سے بچتے پھر رہے تھے ۔ ٹاپرز کا گھوٹالہ 31ٍ مئی 2016 کو سامنے آیا تھا جب سوشل سائنس اور سائنس کے ٹاپرز اپنے مضامین سے متعلق معمولی بنیادی سوالات تک کے جواب نہیں دے پائے تھے ۔ ٹاپر روبی رائے نے ”پولیٹککل سائنس” کو ”پروڈیگل سائنس” بولا اور بتایا کہ اس مضمون میں کھانا پکانا سکھاتے ہیں۔ سائنس کے ٹاپر سوربھ شریسٹھ کو یہ تک نہیں معلوم تھا کی الیکٹرون اور پروٹون کیا ہوتے ہیں۔نیز ناواقفیت کی بنا پر کہا کہ المونیم سب سے زیادہ متعامل مادہ ہے جو غلط ہے ۔
مایاوتی کا دورہ گجرات
نئی دہلی ،3اگست (یواین آئی)بہوجن سماج پارٹی(بی ایس پی ) کی صدر مایاوتی گجرات جائیں گی،جہاں وہ ان دلت نوجوانوں سے ملاقات کریں گی جن کی اونا میں پٹائی کی گئی تھی۔ محترمہ مایاوتی نے آج یہاں پارلیمنٹ ہاؤس کے احاطے میں نامہ نگاروں کو بتایا کہ وہ گجرات میں مظالم کے شکار دلتوں سے ملنے اونا جارہی ہیں ۔انہوں نے کہا،”میں کل اونا میں دلت متاثرین سے ملنے کے لئے گجرات جارہی ہوں۔” گجرات کے اونا میں چند دلت نوجوانوں کی مردہ گائے کے ساتھ پکڑکر پٹائی کی گئی تھی ۔وہ ان مرے ہوئے مویشیوں کی کھال اتارنے کے لئے جارہے تھے ۔گزشتہ دنوں اس واقعہ نے گجرات کی سیاست میں ہلچل مچا دی تھی اور اس کے بعد وزیر اعلی آنندی بین پٹیل کو استعفیٰ بھی دینا پڑا ہے ۔

TOPPOPULARRECENT