Saturday , August 19 2017
Home / ہندوستان / بہار کے نتائج میرے والد اخلاق احمد کو خراج

بہار کے نتائج میرے والد اخلاق احمد کو خراج

نفرت کی سیاست کیلئے ملک میں کوئی جگہ نہیں، فرزند سرتاج احمدکا تاثر
بیساڈا (دادری) ، 9 نومبر (سیاست ڈاٹ کام) بہار کے انتخابی نتائج کا سارے ملک میں بے چینی اور تجسس کے ساتھ انتظار کیا جارہا تھا ، ان میں اُترپردیش کا دوردراز کا بیساڈا ، داداری دیہات بھی شامل ہے جہاں لوگ ٹی وی سٹس کے سامنے بیٹھے نتائج کا مشاہدہ کررہے تھے ۔ جیسے ہی انتخابی نتیجہ سیکولر اتحاد کے حق میں آیا ، ایسے محسوس ہوا جیسے نفرت کی سیاست کو شکست ہوئی ہے ۔ بہار انتخابات میں ’’دادری ‘‘ نے بھی کافی اہم کردار ادا کیا ہے ۔ اخلاق احمد کو ستمبر میں ہجوم نے محض اس افواہ کی بناء پر شدید زدوکوب کے ذریعہ قتل کردیا کہ اُس نے اپنے گھر میں گائے کا گوشت محفوظ کیا ہوا تھا ۔ آخرکار یہ افواہ جھوٹی ثابت ہوئی ۔ اس واقعہ کے بعد بہار کے علاوہ ملک بھر میں نفرت کی سیاست اور عدم رواداری کے خلاف مہم شروع ہوئی۔ بہار انتخابی نتائج نے ثابت کردیا ہے کہ عوام نے ترقی کے حق میں اپنا فیصلہ سنایا ہے ۔ اخلاق احمد کے بڑے فرزند سرتاج احمد نے جو ہندوستانی فضائیہ میں کارپورل ہیں کہا کہ بہار کا انتخابی نتیجہ اُن کے والد کو خراج ہے ۔ عوام نے فرقہ پرست طاقتوں کے اتحاد کے خلاف آواز اُٹھائی ہے ۔ انھوں نے کہاکہ ملک میں نفرت کی سیاست کیلئے کوئی جگہ نہیں ۔ بہار کا نتیجہ اُن کے والد کو خراج اور ساتھ ہی ساتھ نفرت و فرقہ پرستی کے خلاف فیصلہ ہے ۔ عوام کو سمجھنا چاہئے کہ مذہب کے نام پر لڑنے کا کوئی فائدہ نہیں۔ میری تمام سیاست دانوں سے اپیل ہے کہ اقتدار کی خاطر اس ملک کو تقسیم نہ کریں۔ اتوار کو رائے دہی کے دوران بیساڈا دیہات میں غیرمتوقع برقی منقطع ہوگئی لیکن تمام نے یکجا ہوکر انورٹرس اور جنریٹرس کا انتظام کیا ۔

TOPPOPULARRECENT