Tuesday , May 23 2017
Home / شہر کی خبریں / بیروزگاروں کو فوری روزگار فراہم کرنے حکومت کے پاس علاء الدین کا چراغ نہیں

بیروزگاروں کو فوری روزگار فراہم کرنے حکومت کے پاس علاء الدین کا چراغ نہیں

مفادات حاصلہ کے احتجاج سے طلبہ کے مستقبل کو نقصان، وزیر آئی ٹی تلنگانہ کے ٹی آر کا ریمارک

حیدرآباد ۔11 فبروری (سیاست نیوز) ریاستی وزیر آئی ٹی کے ٹی آر نے کہا کہ پلک جھپکتے ہی بیروزگار نوجوانوں کو روزگار فراہم کرنے کیلئے حکومت کے پاس علاء الدین کا چراغ نہیں ہے۔ چند شخصیتیں اور طاقتیں نوجوانوں کو احتجاج کی راہ پر گامزن کرتے ہوئے نوجوانوں اور ریاست کے مستقبل کو نقصان پہنچانے کی کوشش کررہے ہیں۔ ہریتا پلازا میں منعقدہ ٹاسک پروگرام سے خطاب کرتے ہوئے کے ٹی آر نے کہا کہ چند شخصیتیں اور طاقتیں اپنے اپنے ذاتی مفادات کی تکمیل کیلئے نوجوانوں کو مشتعل کررہے ہیں۔ ریاستی وزیر نے نوجوانوں کو ان کے جھانسے میں نہ آتے ہوئے اپنا مستقبل اور ریاست کی ترقی کو نقصان نہ پہنچانے کا مشورہ دیا۔ کے ٹی آر نے کہا کہ کوئی بھی حکومت نوجوانوں سے جھگڑا مول لینا نہیں چاہتی۔ تلنگانہ حکومت کے پاس علاء الدین کا چراغ نہیں ہے اگر ہوتا تو تلنگانہ کے ساتھ ساتھ سارے ملک کے نوجوانوں کو روزگار فراہم کیا جاتا تھا۔ انہوں نے تلنگانہ میں روزگار کے زیادہ سے زیادہ مواقع فراہم ہونے کی توقع کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ تلنگانہ حکومت کی صنعتی پالیسی سے متاثر ہوکر عالمی سطح کی کمپنیاں تلنگانہ میں سرمایہ کاری لگانے میں اپنی دلچسپی کا اظہار کررہی ہیں۔ ریاست میں امن و امان کا ماحول ہے۔ احتجاج سے ریاست کا مستقبل خطرہ میں پڑجانے کا انتباہ دیا۔ سرمایہ کاری آنے پر ہی بیروزگار نوجوانوں کو روزگار کے مواقع دستیاب ہوں گے۔ تاہم اس کی پرواہ کئے بغیر چند شخصیتیں اور طاقتیں ریاست میں احتجاج کی حکمت عملی تیار کررہے ہیں۔ چیف منسٹر تلنگانہ کے سی آر کی نگرانی اور ان کے جاری کردہ رہنمایانہ اصول کی روشنی میں زیادہ سے زیادہ بیروزگار نوجوانوں کو روزگار فراہم کرنے کی منصوبہ بندی کی جارہی ہے۔ ’’ٹی حب‘‘ تیار کرتے ہوئے کمپنیوں کے قیام کو ترجیح دی جارہی ہے۔ جاریہ سال 2016-17ء کے دوران تلنگانہ کی شرح ترقی میں 19 فیصد کا اضافہ ہوا ہے۔ نوجوانوں کے اسکیل ڈیولپمنٹ کو فروغ دینے کیلئے کتہ گوڑم میں ٹاسک کا قیام عمل میں لایا جارہا ہے۔ نوجوانوں کو تیکنیکی سافٹ اسکیل تربیت فراہم کرنے کیلئے تلنگانہ اسٹیٹ اسکیل مشن کا بھی قیام عمل میں لایا جارہا ہے۔ وہ جاپان اور کوریا کا دورہ کرچکے ہیں۔ وہاں کی حکومتیں انسانی وسائل کا بھرپور استعمال کرتے ہوئے ترقی کے منازل طئے کررہے ہیں۔ وہ کئی ممالک کا دورہ کرتے ہوئے وہاں کی صورتحال کا جائزہ لے چکے ہیں۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT