Wednesday , June 28 2017
Home / دنیا / بیگم حضرت محل ہندوستان کی آزادی کی محرک : سفیر

بیگم حضرت محل ہندوستان کی آزادی کی محرک : سفیر

کھٹمنڈو ۔ 7 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) ہندوستان نے آج بیگم حضرت محل کی خدمات کو یاد کرتے ہوئے انہیں زبردست خراج عقیدت پیش کیا جنہوں نے 1857-58 میں برطانوی سامراج کے خلاف علم بغاوت بلند کرنے میں اہم رول ادا کیا تھا۔ بیگم حضرت محل جیسی شخصیتوں سے متاثر ہوکر ہندوستان کی آزادی کی تحریک نے بعدازاں زور پکڑا جس کا سہرہ بیگم حضرت محل کے سر بندھتا ہے۔ ہندوستان کے سفیر متعینہ نیپال منجیو سنگھ پوری نے بیگم حضرت محل کی 138 ویں برسی کے موقع پر ان کے مزار پر گلہائے عقیدت پیش کرنے کے بعد ہندوستان کی آزادی میں بیگم حضرت محل کے رول کی سراہنا کی۔ انہوں نے کہا کہ 1857ء ہندوستان کی تاریخ میں اہم سال ہے جس نے ہندوستان کی آزادی کی بنیاد رکھی۔ برسی کے موقع پر ترتیب دیئے گئے ایک پروگرام کے دوران اپنے خطاب میں انہوں نے کہا کہ بیگم حضرت محل جیسی شخصیتوں نے ہمیں ہندوستان کی آزادی کیلئے متحرک کیا۔ 1859ء میں بیگم حضرت محل نے نیپال میں پناہ حاصل کی تھی۔ 7 اپریل 2017ء ان کی موت کا 138 واں سال ہے۔ اس وقت کے نیپالی وزیراعظم جنگا بہادر رانا نے بیگم حضرت محل کو نیپال میں سیاسی پناہ کی پیشکش کی تھی۔ 1820ء میںپیدا ہوئیں بیگم حضرت محل نے تقریباً 20 سال نیپال میں گذارے اور 1879ء میں وہیں ان کا انتقال ہوگیا تھا۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT