Friday , May 26 2017
Home / ہندوستان / بی ایس ایف کے دو جوانوں پر عصمت دری کا الزام

بی ایس ایف کے دو جوانوں پر عصمت دری کا الزام

اگرتلہ، 13 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) تریپورہ کے ضلع دھلائی میں روجاپاڑا علاقے میں رہنے والی دو قبائلی خواتین نے بارڈر سیکورٹی فورس (بی ایس ایف) کے دو جوانوں پر ان کی عصمت دری کا الزام لگایا ہے ۔متاثرہ خواتین کے اہل خانہ نے ضلع دھلائی کے گنگا نگر تھانے میں کل معاملہ درج کرایا۔ ملزم جوان بی ایس ایف کی 10 ویں بٹالین کے ہیں۔ ان پر الزام ہے کہ عصمت دری کے بعد انہوں نے اس معاملے کا انکشاف کسی سے نہیں کرنے کی دھمکی دی۔سرحدی گاؤں مالدہ روجاپاڑا میں رہنے والے والی متاثرہ خواتین نے الزام لگایا کہ 8 مئی کو وہ کھیت میں کام کرکے واپس آ رہی تھیں کہ اسی دوران بی ایس ایف کے جوانوں نے ان کی عصمت دری کی۔ جوانوں نے دھمکی دی کہ اگر اس واقعہ کے بارے میں انہوں نے کسی کو بتایا تو انہیں اس کے سنگین نتائج بھگتنے ہوں گے ۔پولیس نے معاملہ درج کر کے اس کی تفتیش شروع کر دی ہے لیکن اب تک کوئی گرفتار عمل میں نہیں آئی ہے ۔ انہوں نے کہا مجرموں کی شناخت کے لئے جوانوں کی پریڈ کی جائے گی۔حالیہ دنوں میں تریپورہ میں بی ایس ایف کے جوانوں پر تیسری بار اس طرح کا الزام لگا ہے ۔

 

وادی کشمیر میں انٹرنیٹ
خدمات بحال
سرینگر ۔ /13 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) سرینگر لوک سبھا حلقہ میں رائے دہی کا مرحلہ پورا ہوتے ہی وادی کشمیر میں آج انٹرنیٹ سہولت بحال کردی گئی ۔ پولیس کے ایک عہدیدار نے کہا کہ صورتحال میں بہتری اور ضلع بڈگام کے 38 پولنگ بوتھس پر پرامن مکرر رائے دہی کے پیش نظر انٹرنیٹ سرویس بحال کی جارہی ہے ۔ سرینگر لوک سبھا حلقہ کیلئے ضمنی انتخابات کے سلسلے میں اتوار کو رائے دہی کے دن بڑے پیمانہ پر تشدد کے واقعات پیش آئے تھے ۔ الیکشن کمیشن نے 38 پولنگ بوتھس پر دوبارہ رائے دہی کا حکم دیا تھا ۔ پولیس عہدیدار نے کہا کہ /8 اپریل کو انٹرنیٹ سرویس جو معطل کردی گئی تھی اسے اب بحال کیا جارہا ہے ۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT