Tuesday , August 22 2017
Home / Top Stories / بی جے پی اور ترنمول کانگریس ایک ہی سکہ کے دورخ

بی جے پی اور ترنمول کانگریس ایک ہی سکہ کے دورخ

نریندر مودی اور ممتابنرجی پر عوام کو دھوکہ کرنے کا الزام : سونیا گاندھی
سجاپور ۔ 13 اپریل (سیاست ڈاٹ کاز) کانگریس کی صدر سونیا گاندھی نے مغربی بنگال کی ممتابنرجی حکومت پر سخت تنقید کرتے ہوئے الزام عائد کیا کہ وہ (ممتابنرجی) اقتدار پر فائز ہونے کے بعد اپنے تمام انتخابی وعدے بھول گئی ہیں۔ اس ریاست میں امن و قانون نہیں ہے اور ملک بھر کے مقابلے اس ریاست میں خواتین پر سب سے زیادہ مظالم ہورہے ہیں۔ سونیا گاندھی نے 2011ء کے اسمبلی انتخابات میں ممتابنرجی کی پارٹی ترنمول کانگریس کے ساتھ اپنی پارٹی کی انتخابی مفاہمت کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ ’’پانچ سال قبل ہم نے ان (ممتا) پر یقین کرلیا تھا لیکن ریاست میں اقتدار حاصل کرنے کے بعد وہ تمام وعدے فراموش کرچکی ہیں اور انہوں نے عوامی امنگوں کی تکمیل نہیں کی‘‘۔ سونیا گاندھی نے یہاں ایک انتخابی جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ’’وہ (ممتا بنرجی) ایک خاتون ہونے کے باوجود ان کی ریاست میں خواتین پر مظالم ہورہے ہیں جو ملک میں سب سے زیادہ ہیں اور اس ریاست میں امن و قانون نام کی کوئی چیز ہی نہیں ہے‘‘۔ سونیا گاندھی نے بی جے پی اور ترنمول کانگریس (ٹی ایم سی) کو ایک ہی سکے کے دو رخ قرار دیتے ہوئے کہا کہ ’’ (نریندر) مودی اور ممتا (بنرجی) دونوں ہی عوام سے جھوٹ بول رہے ہیں‘‘۔ سونیا گاندھی نے دعویٰ کیا کہ وزیراعظم نریندر مودی اور ممتابنرجی کے مابین خفیہ سازباز ہے اور الزام عائد کیا کہ مودی حکومت جب کبھی پارلیمنٹ میں مسائل کا سامنا کرتی ہے، ٹی ایم سی اس کی تائید پر اتر آتی ہے۔ جٹ فنڈ اسکام پر سونیا گاندھی نے کہا کہ ایسی کمپنیوں نے عوام کو لوٹ لیا لیکن ممتا اور مودی دونوں ہی نے ان کمپنیوں کے خلاف کوئی کارروائی نہیں کی۔

TOPPOPULARRECENT