Thursday , September 21 2017
Home / سیاسیات / بی جے پی کے اقتدار میں دلت طبقہ عدم تحفظ کا شکار

بی جے پی کے اقتدار میں دلت طبقہ عدم تحفظ کا شکار

فرید آباد کے بہیمانہ واقعہ پر مایاوتی کا شدید ردعمل
لکھنو ۔ 21 ۔ اکٹوبر : ( سیاست ڈاٹ کام ) : فرید آباد میں ایک دلت خاندان پر حملہ کو بدبختانہ قرار دیتے ہوئے صدر بہوجن سماج پارٹی مایاوتی نے آج یہ انتباہ دیا کہ مجرمین کی گرفتاری میں تساہل سے کام لیا گیا تو سڑکوں پر احتجاج کیا جائے گا اور یہ الزام عائد کیا کہ بی جے پی کی حکمرانی میں پسماندہ طبقات عدم تحفظ کا شکار ہیں ۔ بی ایس پی سربراہ نے ایک صحافتی بیان میں بتایا کہ فرید آباد میں ایک دلت خاندان کے مکان کو بہیمانہ طریقہ سے آگ لگا دینے پر 2 کمسن بچوں کی موت بدبختانہ اور قابل مذمت ہے ۔ اگر حکومت ہریانہ کی جانب سے متاثرہ خاندان کی حفاظت اور معاوضہ کی ادائیگی میں پس و پیش اور مجرمین کے خلاف سخت کارروائی سے گریز کیا گیا تو بی ایس پی احتجاج کے لیے سڑکوں پر نکل آئے گی ۔ انہوں نے تاسف کا اظہار کیا کہ آزادی کے کئی سال بعد بھی کمزور طبقات اور دلتوں پر مظالم کا سلسلہ جاری ہے اور کہا کہ مرکز اور متعدد ریاستوں میں حکومتیں ، ذات پات کی ذہنیت اور امتیازات برت رہی ہیں ۔ مایاوتی نے الزام عائد کیا کہ بی جے پی کے زیر اقتدار مرکز اور متعدد ریاستوں میں کمزور طبقات عدم تحفظ کا شکار ہیں جس کے سنگین عواقب و نتائج برآمد ہوسکتے ہیں ۔ انہوں نے ہریانہ میں بی ایس پی قائدین کو ہدایت دی کہ متاثرہ خاندان کی ممکنہ امداد فراہم کریں ۔ واضح رہے کہ بلبھ گڑھ کے قریب سوپٹیڈ گاؤں میں کل شب ایک دلت خاندان کے مکان کو اعلیٰ ذات کے افراد کی جانب سے آگ لگادینے پر 2 بچے زندہ جل گئے تھے اور ان کے والدین شدید جھلس گئے ہیں ۔ پولیس نے 11 افراد بشمول اصل مجرمین ایک باپ اور بیٹے کے خلاف کیس درج کرلیا ہے ۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT